.

داعش نے مصری فوجیوں پر حملے کی ذمہ داری قبول کرلی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

#مصر میں دولت اسلامیہ عراق وشام '#داعش' سے وابستہ تنظیم نے جمعرات کے روز شمالی #سیناء میں ہونے والے دھماکے کی ذمہ داری قبول کر لی ہے۔ اس حملے میں ایک فوجی کرنل اور تین فوجی ہلاک ہوگئے تھے۔

سیناء میں ہونے والی اس کارروائی میں صوبائی دارالحکومت #العریش میں مصری فوجیوں کی بکتر بند گاڑی کو نشانہ بنایا۔ اس دھماکے کے نتیجے میں 12 فوجی زخمی ہوگئے تھے۔

شدت پسندوں کی جانب سے جاری کردہ ایک آن لائن بیان میں داعش کی وفادار تنظیم کا کہنا تھا کہ اس کے ارکان نے العریش کے مغرب میں فوج کو نشانہ بنایا ہے۔

تنظیم کا کہنا ہے کہ یہ حملے حکومت کی جانب سے سابق صدر #محمد_مرسی کے حمایتیوں پر کریک ڈائون کے ردعمل کے طور پر کئے گئے ہیں۔

مصری حکام کے مطابق 2013 سے سیکیورٹی فورسز پر حملوں کے نتیجے میں سینکڑوں فوجی اور پولیس اہلکار اپنی جانیں گنوا بیٹھے ہیں۔ مصر کی داعشی شاخ نے ہی روس کے کمرشل ہوائی جہاز کو فضاء میں دھماکے سے اڑانے کی ذمہ داری قبول کی تھی۔