.

داعش سے متعلق سوال پر جان کیری شرمسار!

سوال پوچھنے والی اطالوی صحافیہ کو کانفرنس سے نکال دیا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عالمی دہشت گرد تنظیم ’’داعش‘‘ کی سرکوبی کے لیے امریکی حکام بہت ڈھنڈورا پیٹتے ہیں مگرعالمی سطح پر انہیں داعش کے حوالے سے تلخ سوالات کا بھی سامنا رہتا ہے۔ حال ہی میں روم میں ایک نیوز کانفرنس کے دوران ایک اطالوی خاتون صحافی نے بھی داعش سے متعلق امریکی وزیرخارجہ جان کیری سے چُھبتا ہوا سوال پوچھ لیا جس پروہ شرمسار ہوئے اور سوال نظرانداز کر دیا گیا۔ کانفرنس ہال میں موجود پولیس نے صحافیہ کو وہاں سے باہر نکال دیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق امریکی وزیرخارجہ جان کیری اپنے اطالوی ہم منصب پاؤلو جنیٹلونی کے ہمراہ ایک مشترکہ نیوز کانفرنس کررہے تھے۔ اس دوران ایک مقامی خاتون صحافیہ نے جان کیری کو ایک سوال لکھ کر بھیجا جس میں اس نے لکھا کہ ’’آپ تو خود داعش کے بانی ہیں‘‘۔ جان کیری نے صحافیہ کو ایک طائرانہ نگاہ سے دیکھا مگر اس کے سوال کا کوئی جواب نہیں دیا۔ اس واقعے پر وہاں پر موجود سیکیورٹی حکام نے خاتون صحافیہ کو وہاں سے باہر نکال دیا تاکہ وہ اپنے سوال کا اعادہ نہ کر سکے۔

خیال رہے کہ امریکی حکام سے امریکا کے اندر اور باہر مختلف اوقات میں القاعدہ اور داعش کے بارے میں اسی نوعیت کے سوالات کیے جاتے رہے ہیں۔ کچھ عرصہ پیشتر سابق امریکی صدر جارج بش کے بھائی اور ری پبلیکن پارٹی کے صدارتی امیدوار جیب بوش سے ایک خاتون نے بھرے مجمع میں مخاطب ہو کرکہا تھا کہ ’’جناب، داعش آپ کے بھائی صاحب نے بنائی تھی‘‘۔ خاتون کی مراد سابق صدر جارج ڈبلیو بش تھے جنہوں نے صدام حسین کے وسیع پیمانے پر تباہی پھیلانے والے ہتھیاروں کو تباہ کرنے کی آڑ میں عراق پر جنگ مسلط کی تھی۔