.

یمن : سعودی فضائی حملوں اورجھڑپوں میں 60 حوثی ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی قیادت میں اتحاد کے یمن میں مختلف علاقوں پر فضائی حملوں اور حالیہ جھڑپوں میں کم سے کم ساٹھ حوثی باغی ہلاک اور بیسیوں زخمی ہوگئے ہیں۔

العربیہ نیوز چینل نے ایک رپورٹ میں بتایا ہے کہ جنوب مغربی گورنری تعز میں سعودی عرب کی قیادت میں عرب اتحاد کے لڑاکا طیاروں نے حوثی باغیوں کے زیر قبضہ علاقوں پر بمباری کی ہے۔

یمنی صدر عبد ربہ منصور ہادی کی وفادار عوامی مزاحمتی فورسز سے تعلق رکھنے والے ذرائع نے بتایا ہے کہ بمباری میں حوثی ملیشیا کے ایک لیڈر یحییٰ ظفران سمیت انتیس جنگجو مارے گئے ہیں۔

ذرائع کے مطابق حوثی ملیشیا کے چھے جنگجو صوبہ مآرب میں مارے گئے ہیں اور اتحادی طیاروں کے فضائی حملے میں حوثیوں کا اسلحے کا ایک ڈپو تباہ ہوگیا ہے۔

ذرائع نے یہ بھی اطلاع دی ہے کہ دارالحکومت صنعا کے مشرق میں یمنی فوج اور ان کی اتحادی عوامی مزاحمتی فورسز کے ساتھ جھڑپوں میں حوثی ملیشیا کے دس جنگجو مارے گئے ہیں۔ان میں حوثیوں کا ایک کمانڈر یحییٰ المتوکل طہٰ بھی شامل ہے۔

وسطی صوبہ ایب میں عوامی مزاحمتی فورسز نے اچانک حملہ کرکے پانچ حوثی باغیوں کو ہلاک کردیا ہے۔صوبہ بیضا میں ان کے حوثیوں کے ٹھکانے پر ایک اور حملے میں پانچ جنگجو ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے ہیں۔یمن کی مغربی گورنری الحدیدہ میں حوثیوں کا لیڈر عبدالوہاب الحوثی ہادی نواز عوامی مزاحمتی فورسز کی کارروائی میں ہلاک ہوگیا ہے۔