.

یمنی فوج کا سینیر کمانڈر عدن میں فائرنگ سے قتل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے جنوبی شہر عدن میں ایک مسلح شخص نے فوج کے ایک سینیر کمانڈر کو فائرنگ کرکے قتل کردیا ہے۔

یمنی ذرائع کے مطابق مسلح حملہ آور ایک موٹر سائیکل پر سوار تھا اور اس نے عدن کے علاقے شیخ عثمان میں جنرل عبد ربہ حسین کو گھر سے نکلتے ہوئے گولی مار دی ہے۔

مقتول جنرل حسین یمنی فوج کے پندرھویں انفینٹری بریگیڈ کے کمانڈر تھے۔یہ بریگیڈ عدن کے مغرب میں واقع صوبے ابین میں القاعدہ کے جنگجوؤں کے خلاف بروئے کار ہے۔حالیہ ہفتوں کے دوران القاعدہ کے جنگجوؤں نے ابین کے متعدد بڑے شہروں ہر قبضہ کر لیا ہے۔

یمنی صدر عبد ربہ منصور ہادی کی بین الاقوامی سطح پر تسلیم شدہ حکومت نے صنعا پر حوثی باغیوں کے قبضے کے بعد عدن کو گذشتہ سال مارچ میں اپنا عبوری دارالحکومت قرار دیا تھا۔ان کی حکومت کے اعلیٰ عہدے دار گذشتہ سال اگست میں اس شہر پر یمنی فورسز کے مکمل کنٹرول کے بعد سعودی دارالحکومت الریاض سے منتقل ہوئے تھے۔

تب سے القاعدہ اور داعش کے جنگجو اس شہر میں یمنی عہدے داروں پر متعدد بڑے حملے کر چکے ہیں جبکہ ہادی حکومت کے تحت فوج اور سعودی عرب کی قیادت میں عرب اتحاد کی فورسز عدن کو محفوظ بنانے کے لیے کوشاں ہیں۔