.

عراقی کردستان اور روس کے درمیان اسلحے کی امداد پر بات چیت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایک روسی خبر رساں ایجنسی کے مطابق جمعرات کے روز روس میں عراقی کردستان کے نمائندہ بیورو کے سربراہ نے کہا ہے کہ عراقی ریجن کا ایک وفد اپریل میں ماسکو کا دورہ کرے گا جہاں وہ روس کی جانب سے اسلحے کی امداد پر بات چیت کرے گا۔

اس سے قبل بدھ کے روز مذکورہ خبر رساں ایجنسی نے عراق میں روسی قونصل خانے کے حوالے سے بتایا تھا کہ ماسکو حکومت پہلے ہی کردوں کے لیے اسلحے کی فراہمی کی تصدیق کرچکی ہے.. اور اس سلسلے میں پہلی کھیپ 14 مارچ کو پہنچی تھی۔

اس کھیپ میں 5 طیارہ شکن توپیں اور ان توپوں کے 20 ہزار گولے شامل ہیں۔