.

برسلز :ہوائی اڈے پر حملے کا مرکزی مشتبہ کردار گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

بیلجیئن پولیس نے برسلز کے ہوائی اڈے پر بم حملوں کے مرکزی مشتبہ کردار نجم العشراوی کو گرفتار کر لیا ہے۔بیلجیئن میڈیا کی رپورٹس کے مطابق العشراوی کا نومبر میں پیرس میں دہشت گردی کے حملوں میں ملو٘ث مرکزی مشتبہ ملزم صلاح عبدالسلام سے تعلق رہا ہے۔

بیلجیئن پولیس نے العشراوی کو برسلز کے علاقے آندرلشط سے ایک چھاپا مار کارروائی کے دوران گرفتار کیا ہے۔اس کی شناخت کا پتا ہوائی اڈے پر نصب کلوز سرکٹ کیمروں کی فوٹیج سے چلا تھا اور وہ ان دو خودکش حملہ آوروں کے ساتھ نظر آرہا تھا جنھوں نے خود کو دھماکوں سے اڑایا تھا۔

بیلجیئن حکام نے ان دونوں بھائیوں کو خالد اور ابراہیم البکراوی کے نام سے شناخت کیا ہے۔برسلز سے العربیہ نیوز کے نمائندے نے بتایا ہے کہ نجم العشراوی کی شناخت ان دونوں خودکش بمباروں کے ناموں کا پتا چلنے کے بعد ہوئی تھی۔اس طرح بیلجیئن حکام خودکش بمباروں کے سہولت کاروں کی شناخت اور انھیں گرفتار کرنے میں کامیاب ہوگئے ہیں۔

حملوں سے قبل کی جاری کردہ تصاویر میں ہوائی اڈے پر نجم العشراوی سفید کوٹ اور سیاہ ہیٹ میں نظر آرہا ہے۔اس کا اصلی وطن ترکی ہے۔وہ 1991ء میں پیدا ہوا تھا اور 2013ء میں اس نے شام کا سفر کیا تھا۔اس کے علاوہ دو اور مشتبہ حملہ آور منگل کی صبح ہوائی اڈے پردھماکوں کے بعد فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے تھے۔

پولیس مذکورہ ان دونوں خودکش بمبار بھائیوں کی شناخت کے بارے میں اس سے پہلے بھی آگاہ تھی۔انھوں نے برسلز زیونتم ہوائی اڈے کے ڈیپارچر ہال میں بم دھماکے کیے تھے اور ان میں چودہ افراد ہلاک اور نوّے زخمی ہوگئے تھے۔

خالد البکراوی نے جعلی نام سے بیلجیئن دارالحکومت کے اسی علاقے میں ایک فلیٹ کرائے پر لے رکھا تھا جہاں پولیس نے گذشتہ ہفتے ایک چھاپا مار کارروائی کے دوران ایک مسلح شخص کو ہلاک کردیا تھا۔

تفتیش کاروں کو اس فلیٹ سے داعش کا ایک جھنڈا ،ایک آتشیں رائفل، ڈیٹونیٹرز اور پیرس حملوں کے مرکزی مشتبہ کردار صلاح عبدالسلام کے انگلیوں کے نشان ملے تھے۔اس کو تین روز بعد گرفتار کر لیا گیا تھا اور اس کے تین روز بعد برسلز میں بم دھماکے ہوئے ہیں۔داعش نے ان حملوں کی ذمے داری قبول کی ہے۔