.

روسی بمبار طیارے نے امریکی کمانڈوز کے ہوش اڑا دیے!

سوخوی 24 کی امریکی بحری بیڑے سے صرف 9 میٹرکے فاصلے سے پرواز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی وزارت دفاع کے ایک سینیرعہدیدار نے انکشاف کیا ہے کہ روسی فوج کے جنگی طیاروں کی پروازوں کے دوران دشمنانہ کارروائیاں جاری ہیں جس کا ایک تازہ واقعہ حال ہی میں اس وقت پیش آیا جب روس کے ایک بمبار طیارے نے سمندر میں موجود امریکی کمانڈوز کے ہوش اڑا دیے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق اپنا نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پرامریکی محکمہ دفاع کے عہدیدار نے بتایا کہ سوموار اور منگل کے درمیان عالمی سمندر میں بحر البلطیق میں کھڑے امریکی بحری بیڑے ’’یو ایس ایس ڈنلڈ کوک‘‘ پر موجود عملے کو اس وقت سخت پریشانی اور خوف کا سامنا کرنا پڑا جب روس کے’’سوخوی 24 ‘‘ بمبار طیارے نے بحری بیڑے سے محض نو میٹر کی بلندی پر پرواز کی۔

امریکی عہدیدار کا کہنا ہے کہ آج تک ہم نے اس نوعیت کا مشاہدہ نہیں کیا۔ روسی فوج کی جانب سے دشمنانہ کارروائیوں کی یہ ایک منفرد مثال تھی۔ یہ واقعہ سمندر میں کالنینیگراد کے مقام سے 70 ناٹیکل میل کی مسافت پر کھڑے بحری بیڑے کے عملے کے ساتھ پیش آیا۔ تاہم امریکی حکام کی جانب سے اس واقعے کو صیغہ راز میں رکھا گیا ہے۔