.

ایران : پارلیمانی انتخابات کے دوسرے مرحلے کی پولنگ

مجلس خبرگان کی 68 نشستوں کے انتخاب کے لیے ایرانی ووٹ ڈال رہے ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایران میں پارلیمانی انتخابات کے دوسرے مرحلے میں آج جمعہ کو ووٹ ڈالے جارہے ہیں۔اس مرحلے میں 290 نشستوں پر مشتمل مجلس خبرگان (اسمبلی ) کی 68 نشستوں پر پولنگ ہورہی ہے۔

ایران کے وزیر داخلہ عبدالرضا رحمانی فاضلی نے سرکاری ٹیلی ویژن سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا ہے کہ ''ووٹر68 حلقوں میں ارکان پارلیمان کا انتخاب کریں گے۔ان حلقوں میں انتخابات کے پہلے مرحلے میں امیدوار کل ڈالے گئے ووٹوں کا 25 فی صد ووٹ حاصل کرنے میں ناکام رہے تھے''۔

رحمانی فاضلی کا کہنا ہے کہ دوسرے مرحلے کے انتخابات کے نتائج کا اعلان اتوار کو کیا جائے گا۔اس نومنتخب پارلیمان کا پہلا اجلاس 27 مئی کو ہوگا۔واضح رہے کہ مجلس خبرگان کو اہم پالیسی امور پر براہ راست کوئی کنٹرول حاصل نہیں ہے لیکن وہ ملکی معیشت کی بحالی کے لیے صدر حسن روحانی کی پالیسیوں کی حمایت کرسکتی ہے اور اعتدال پسندوں کی بالادستی کی حامل پارلیمان حسن روحانی کے 2017ء میں دوبارہ انتخاب میں اثرانداز ہوسکتی ہے۔

ایران میں 26 فروری کو منعقدہ پارلیمانی انتخابات کے پہلے مرحلے میں صدر حسن روحانی کے اعتدال پسند اتحادیوں نے نمایاں کامیابی حاصل کی تھی لیکن وہ اکثریت حاصل کرنے میں ناکام رہے تھے۔ایران کی موجودہ پارلیمان میں سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای کے اتحادیوں کا غلبہ ہے۔

صدر روحانی کے اتحادی دارالحکومت تہران کی تمام تیس نشستیں حاصل کرنے میں کامیاب رہے تھے ۔ خود ایرانی صدر تہران میں مجلس خبرگان کے انتخاب میں کامیاب امیدواروں میں تیسرے نمبر پر رہے تھے جبکہ ان کے اتحادی سابق صدر آیت اللہ اکبر ہاشمی رفسنجانی پہلے نمبر پر رہے تھے۔مجلس خبرگان کے اس انتخاب کو اس لیے بھی اہمیت دی جارہی ہے کیونکہ یہی مجلس ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای کے انتقال کی صورت میں ان کے جانشین کا انتخاب کرے گی۔