.

مکہ میٹرو منصوبے کی تکمیل میں کوئی تاخیر نہیں ہوگی

62 ارب سعودی ریال کے ریلوے منصوبے پر عمل درآمد جاری ہے: چیف ایگزیکٹو

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مکہ ماس ریل ٹرانزٹ (ایم ایم آر ٹی) کے چیف ایگزیکٹو علی عبدالفتاح نے کہا ہے کہ مکہ میں 62 ارب سعودی ریال کے میٹرو ریلوے منصوبے پر عمل درآمد جاری ہے اور اس کی تکمیل میں کوئی تاخیر نہیں ہوگی۔

قبل ازیں برطانوی خبررساں ادارے رائیٹرز نے ان کے حوالے سے یہ اطلاع دی تھی کہ اس منصوبے میں تاخیر ہوگئی ہے۔اس لیے اب اس کے لیے مالی رقوم کے بندوبست پر نظرثانی کی جاسکتی ہے۔

انھوں نے دبئی میں تعمیراتی صنعت سے متعلق منعقدہ ایک کانفرنس میں بتایا تھا کہ منصوبے میں تاخیر کی وجہ مالیاتی بندوبست پر نظرثانی ہے۔

انھوں نے کہا کہ سعودی عرب میں نجی فنڈز سے چلنے والی اسکیموں پر کام متاثر نہیں ہوا ہے جبکہ حکومت کے فنڈز سے چلنے والے تمام منصوبوں پر نظرثانی کی جارہی ہے یا ان کی دوبارہ منصوبہ بندی کی جارہی ہے۔

عبدالفتاح نے مزید بتایا کہ ''بجٹ کی نئی تحدیدات کے بعد مکہ کے لیے ریلوے منصوبے میں بھی تبدیلیاں کی گئی ہیں۔مثلاً میٹرو اسٹیشنوں کے ڈیزائن میں تبدیلیاں کی گئی ہیں''۔

بعد میں علی عبدالفتاح نے العربیہ ٹیلی ویژن سے گفتگو کرتے ہوئے کہا:'' یقیناً جو کچھ کہا اور لکھا گیا ہے،وٹس اپ کیا گیا اور ہیش ٹیگ لگائے گئے ہیں،میں ان کی مکمل طور پر تردید کرتا ہوں۔ان میں سے کچھ بھی درست نہیں ہے۔کانفرنس میں میرا بیان ریکارڈ کیا گیا تھا اور یہ ایک ٹیکنیکل کانفرنس تھی،سیاسی کانفرنس نہیں تھی''۔