سعودیہ: 10 رمضان المبارک سے دھوپ میں کام پر پابندی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی وزارت لیبر و سماجی ترقی نے مزدور پیشہ افراد کی بہبود اور ان کی صحت و حفاظت کے پیش نظر 10 رمضان المبارک بہ مطابق 15 جون 2016 سے 14 ذی الحجہ 15ستمبر تک دھوپ میں محنت مزدوری کرنے پر پابندی عاید کردی ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق سعودی وزارت لیبر کے سیکرٹری برائے ماحولیاتی بہبود ڈاکٹر فہد عبداللہ العویدی نے ایک بیان میں بتایا کہ کام کاج کی پابندی کا اطلاق کڑی دھوپ کے اوقات میں ہوگی۔ حکومت نے مزدوروں کی بہبود اور ان کی صحت و سلامتی کے پیش نظردن بارہ بجے سے سہ پہر تین بجے تک پابندی عاید کی ہے۔ پابندی کا اطلاق 15 ستمبر تک رہے گا۔ اس کے بعد موسم معتدل ہونا شروع ہوجائے گا اور دھوپ میں کام کاج کرنے میں کوئی دقت پیش نہیں آئے گی۔

انہوں نے مزید کہا کہ اس فیصلے سے تیل اور گیس کی فیلڈ میں کام کرنے والی کمپنیوں اور ایمرجنسی سروسز کے شعبوں میں کام کرنے والے افراد مستثنیٰ ہوں گے۔ تاہم انہیں بھی تاکید کی جاتی ہے کہ وہ اپنی صحت و سلامتی کاخیال رکھیں۔

ڈاکٹر العویدید نے لیبر کے ذریعے کام کرنے والے اداروں اور کمپنیوں پر زور دیا کہ وہ حکومت کے وضع کردہ نظام الاوقات کی سختی سے پابندی کو یقینی بنائیں، تاکہ شدید گرمی کے باعث کام کرنے والے افراد کی صحت پر کسی قسم کا منفی اثر مرتب نہ ہو۔

ایک سوال کے جواب میں سیکرٹری لیبر کا کہنا تھا کہ سعودی عرب کے کم درجہ حرارت والے شہروں میں کام کرنے والے افراد بھی اس فیصلے سے مستثنٰی ہوں گے۔ لیبر کے کام کاج کے نظام الاوقات پر عمل درآمد کے لیے موسمی حالات کے مطابق مقامی حکومتوں سے صلاح مشورہ کیا جاسکتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں