.

موریتانیہ:راشن کی تقسیم کے دوران بھگدڑسے 8 خواتین ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

افریقی ملک موریتانیہ میں ایک مقامی شخص کی جانب سے نادار شہریوں میں راشن کی تقسیم کے دوران بھگدڑ مچنے سے کم سے کم آٹھ عمر رسیدہ خواتین جاں بحق ہوگئیں۔

عالمی خبر رساں ایجنسی ’اے ایف پی‘ نے نواکشوط کے طبی ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ ہلاکتیں اس وقت ہوئی جب ایک مقامی شہری کی جانب سے غریب شہریوں میں راشن تقسیم کیا جا رہا تھا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ بھگدڑ مچنے سے کم سے کم آٹھ خواتین ہلاک اور بیس زخمی ہوئی ہیں۔ یہ واقعہ شہریوں میں زکوۃٰ کی تقسیم کے دوران پیش آیا۔

طبی ذرائع کے مطابق نواکشوط میں ایک مقامی شہری کی جانب سے معمر اور غریب افراد میں راشن تقسیم کیا جا رہا تھا کہ اور راشن کے حصول کے لیے بڑی تعداد میں شہری جمع تھے۔ راشن کی تقسیم کے دوران اچانک بھگدڑ پھیلنے سے کئی خواتین کچلی گئیں جنہیں اسپتالوں میں لایا گیا مگر وہ دم توڑ چکی تھیں۔ ایک مقامی سیکیورٹی اہلکار نے بتایا بھگدڑ پرقابو پانے کی کوشش کی گئی تھی مگر ھجوم کے زیادہ ہونے کے باعث کنٹرول نہیں کیا جاسکا۔