.

روس نے فوجی مداخلت سے اسد رجیم کو مضبوط بنا دیا: سی آئی اے

داعش القاعدہ سے بڑا خطرہ ہے: ڈائریکٹر سی آئی اے جان برینن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکا کے وفاقی خفیہ ادارے ’سی آئی اے‘ کے سربراہ جان برینن نے کہا ہے کہ شدت پسند گروپ دولت اسلامی القاعدہ سے بھی بڑا خطرہ ہے کیونکہ داعش کے ہزار ہا جنگجو پوری دنیا میں پھیل چکے ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ روس نے شام میں فوجی مداخلت کرکے اسد رجیم کو اور بھی طاقت ور بنا دیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق ایوان نمائندگان نے انٹیلی جنس کمیٹی کے روبرو ایک بیان میں جون برینن کا کہنا تھا کہ ایک سال پہلے تک اسد رجیم اتنی مضبوط نہیں تھی جتنی کہ روس کی شام میں عسکری مداخلت کے بعد ہوگئی ہے۔

داعش کے نیٹ ورک میں توسیع کے حوالے سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ لیبیا میں داعش کے 5 سے 8 ہزار جنگجو موجود ہیں اور خدشہ ہے کہ شدت پسند گروپ لیبیا میں اپنا نیٹ ورک مزید پھیلا سکتا ہے۔

سی آئی اے چیف کا کہنا تھا کہ امریکا کی قیادت میں عالمی اتحادی افواج نے داعش کے خلاف جنگ میں کئی اہم کامیابیاں حاصل کی ہیں۔ توقع ہے کہ وسیع علاقہ چھن جانے کے بعد داعش اپنا طریقہ واردات تبدیل کرے گی۔

جان برینن کا کہنا تھا کہ شام اور عراق کے وسیع علاقے سے داعش کا قبضہ ختم ہوچکا ہے۔ امکان ہے کہ داعش اگلے مرحلے میں گوریلا کاروائیوں کا راستہ اختیار کرے گی کیونکہ وہ دو بہ دو لڑائی کی پوزیشن میں نہیں رہی ہے۔