.

برسلز میں شاپنگ مال کے نزدیک مشتبہ شخص گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

بیلجیئم کے دارالحکومت برسلز کے وسط میں واقع ایک خریداری مرکز میں سکیورٹی فورسز نے منگل کے روز انسداد دہشت گردی کی کارروائی کی ہے اور ایک مشتبہ شخص کو گرفتار کر لیا ہے۔

بیلجیئن میڈیا کی اطلاع کے مطابق اس واقعے کی اطلاع ملنے کے بعد وزیراعظم چارلس مشعل نے اپنی سکیورٹی کابینہ کا ایک ہنگامی اجلاس بھی طلب کر لیا۔

نشریاتی ادارے آر ٹی ایل نے بتایا ہے کہ گرینیچ معیاری وقت کے مطابق منگل کی صبح 0430 بجے کے قریب سٹی 2 شاپنگ سنٹر کے نزدیک ایک شخص کو مشتبہ حرکات وسکنات کرتے پایا گیا تھا۔اس نے مبینہ طور پر ایک خودکش جیکٹ پہن رکھی تھی۔اس پر شہر میں بم الرٹ جاری کر دیا گیا۔

برسلز کے پراسیکیوٹرز کے دفتر کا کہنا ہے کہ انسداد دہشت گردی کی اس کارروائی کے دوران ایک مشتبہ شخص کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔اس نے جعلی خودکش جیکٹ پہن رکھی تھی لیکن اس سے کوئی بم برآمد نہیں ہوا ہے۔

یادرہے کہ 22 مارچ کو برسلز کے بین الاقوامی ہوائی اڈے کے ڈیپارچر ہال اور ایک میٹرو اسٹیشن پر تین خودکش بم دھماکے کیے گئے تھے۔ان میں تین حملہ آوروں سمیت پینتیس افراد ہلاک ہوگئے تھے۔شام اور عراق میں برسر پیکار سخت گیر جنگجو گروپ داعش نے ان بم دھماکوں کی ذمے داری قبول کی تھی۔دہشت گردی کے اس واقعے کے بعد سے برسلز میں سکیورٹی ہائی الرٹ ہے۔