.

''عالمی طاقتیں شامی بحران کے حل کے لیے دباؤ ڈالیں''

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اقوام متحدہ کے تحت جنگی جرائم کے تحقیقاتی کمیشن کے سربراہ نے عالمی طاقتوں سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ شام کے متحارب فریقوں پر دوبارہ مذاکرات شروع کرنے کے لیے دباؤ ڈالیں تاکہ اس تنازعے اور شہریوں کے مصائب کا خاتمہ ہوسکے۔

شام کے لیے اقوام متحدہ کے آزاد تحقیقاتی کمیشن کے سربراہ پاؤلو پنہیرو نے منگل کے روز کہا ہے کہ شامی حکومت روزانہ ہی شہری علاقوں پر فضائی حملے کررہی ہے جبکہ داعش سمیت جنگجو گروپ بھی شہریوں پر بلا امتیاز حملے کررہے ہیں۔

مسٹر پنہیرو نے جنیوا میں اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل میں بیان دیتے ہوئے کہا ہے کہ ''تمام ریاستوں کو وقتاً فوقتاً اور بار بار با اثر ممالک اور اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل پر شام میں سیاسی عمل کی غیر مشروط حمایت کے لیے دباؤ ڈالنا چاہیے''۔