فرانس : مہاجر کیمپ کی بندش پر مسلم خاتون کی پولیس سے مڈبھیڑ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

فرانس کے دارالحکومت پیرس میں تارکین وطن کے لیے قائم ایک کیمپ کی بندش کے بعد ایک مسلم خاتون کی پولیس اہلکاروں کے ساتھ مڈ بھیڑ ہوئی ہے اور انھوں نے اس کے ساتھ ناروا سلوک کیا ہے۔

اس کیمپ کو 22 جولائی کو ختم کردیا گیا تھا اور یہ خاتون اسی کیمپ میں رہ رہی تھی۔خاتون اور پولیس کے درمیان چپلقش کے واقعے کی ایک ویڈیو منظرعام پر آئی ہے۔وہ اپنے بچے کی گاڑی کے ساتھ نظر آرہی ہے۔

اس خاتون نےکیمپ کی بندش کے بعد پولیس سے صرف یہ استدعا کی تھی کہ وہ وہاں سے اپنا ذاتی سامان اٹھانا چاہتی ہے لیکن پولیس نے اس کی درخواست مسترد کردی۔

ایک صحافی نے اس تمام واقعے کی ویڈیو فلمائی ہے۔اس کا کہنا ہے کہ ایک پولیس افسر نے خاتون کے بچے کی گاڑی کو ٹھڈا مار دیا تھا۔

برطانوی اخبار دی انڈی پینڈینٹ کی رپورٹ کے مطابق اس کیمپ میں کم سے کم چودہ سو افراد رہ رہے تھے۔ان میں سے بیشتر لوگ کیمپ کی بندش سے قبل وہاں سے اپنا سامان نہیں نکال سکے تھے کیونکہ فرانسیسی پولیس افسروں نے کیمپ کو ختم کرنے کی کارروائی کے دوران انھیں قریب نہیں پھٹکنے دیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں