امریکی جنرل کی ترکی میں انقلاب کی کوشش میں ملوث ہونے کی تردید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

امریکا کی مرکزی کمان کے سربراہ جنرل جوزف ووٹل نے باور کرایا ہے کہ ترکی میں انقلاب کی ناکام کوشش میں ان کے ملوث ہونے سے متعلق دعوے بے بنیاد ہیں۔ یہ بات امریکی فوج کی جانب سے جاری ایک بیان میں کہی گئی ہے۔

امریکی مرکزی کمان کے بیان کے مطابق ووٹل کا کہنا ہے کہ " ترکی میں انقلاب کی حالیہ ناکام کوشش سے میرے تعلق کے حوالے سے کوئی بھی رپورٹ افسوس ناک اور قطعی طور پر غلط ہے"۔

بیان میں مزید کہا گیا کہ " ترکی خطے میں کئی برسوں سے خصوصی شراکت دار ہے ، ہم ترکی کی جانب سے جاری تعاون کی قدر کرتے ہیں اور داعش تنظیم کی پسپائی کے سلسلے میں مسقبل کی شراکت کی بھی توقع کرتے ہیں"۔

ترکی میں 15 جولائی کو فوجی انقلاب کی کوشش کو ناکام بنا دیا گیا۔ اس منصوبے کی قیادت محدود فوجی گروپ کررہے تھے۔ انقلاب کی کوشش کے دوران 200 سے زیادہ افراد ہلاک اور 1000 کے قریب زخمی ہوگئے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں