ترکی : فتح اللہ گولن کے خلاف گرفتاری کا وارنٹ جاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اناضول نیوز ایجنسی کے مطابق استنبول میں مجسٹریٹ کورٹ نے فتح اللہ گولن کے خلاف گرفتاری کا وارنٹ جاری کر دیا ہے۔ وارنٹ میں الزام عائد کیا گیا ہے کہ گولن نے ترکی میں انقلاب کے احکامات دیے تھے۔

واضح رہے کہ 75 سالہ گولن امریکا کے مشرقی ساحل پر پنسلوینیا میں سکونت پذیر ہیں۔ یہاں سے وہ ایک طاقت ور مذہبی سماجی تحریک کو چلا رہے ہیں جس کے لاکھوں ارکان ہیں۔ اس تحریک کا ترک پولیس اور عدلیہ میں بڑا رسوخ ہے۔

اس سے قبل وہائٹ ہاؤس نے اس امر کی تصدیق کی تھی کہ اسے ترکی کی حکومت کی جانب سے فتح اللہ گولن کے معاملے سے متعلق حوالگی کے حوالے سے سرکاری درخواست نما لوازمات موصول ہوئے ہیں۔

امریکی انتظامیہ کا کہنا تھا کہ وزارت انصاف اور وزارت خارجہ ، ترکی اور امریکا کے درمیان 30 برس پہلے طے پانے والے تحویل مجرمان کے معاہدے کے تحت ، موصول ہونے والے لوازمات کا جائزہ لیں گی۔

ادھر وہائٹ ہاؤس کے ترجمان نے یومیہ پریس بریفنگ کے دوران باور کرایا کہ امریکا معاہدے کے حوالے سے اپنی ذمے داری پوری کرے گا ، ساتھ ہی فتح اللہ گولن کے حقوق سے متعلق قانونی اقدامات کی پاسداری کو بھی یقینی بنایا جائے گا۔

ترک فوج کے ایک گروپ نے 15 جولائی کو ملک میں انقلاب کی کوشش کی تھی جس کے دوران 230 سے زیادہ افراد ہلاک اور ہزاروں زخمی ہوگئے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں