.

ڈونلڈ ٹرمپ میکسیکو جائیں گے،صدر نائٹو سے ملاقات کریں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکا کی ری پبلکن پارٹی کے صدارتی امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ نے میکسیکو کے دورے پر جانے کا اعلان کیا ہے اور کہا ہے کہ وہ کل ( جمعرات کو) میکسیکو کے صدر اینرق پینا نائٹو سے ملاقات کریں گے۔

انھوں نے ٹویٹر پر ایک پوسٹ میں کہا ہے کہ انھوں نے صدر نائٹو کی جانب سے دی گئی دورے کی دعوت قبول کر لی ہے۔میکسیکو کے ایوان صدر نے بھی ہسپانوی زبان میں ایک ٹویٹ میں ٹرمپ کے دورے کی تصدیق کی ہے اور کہا ہے کہ نیویارک سے تعلق رکھنے والے ارب پتی رئیل اسٹیٹ ٹائیکون صدر نائٹو سے نجی ملاقات کریں گے۔

میکسیکن صدر کے دفتر نے ایک بیان میں کہا ہے کہ انھوں نے ٹرمپ کے علاوہ ڈیموکریٹک پارٹی کی صدارتی امیدوار ہلیری کلنٹن کو بھی دورے کی دعوت دی ہے اور دونوں کی انتخابی ٹیموں نے خیرسگالی کے جذبے کے ساتھ اس کو موصول کیا ہے۔

ڈونلڈ ٹرمپ میکسیکو سے تعلق رکھنے والے ان غیر قانونی تارکین وطن کے خلاف تندوتیز بیانات جاری کرتے رہتے ہیں جو سرحد عبور کرکے امریکا میں داخل ہو جاتے ہیں۔ری پبلکن صدارتی امیدوار نے انتخابی مہم کے دوران تارکین وطن کے بارے میں سخت پالیسیاں اختیار کی ہیں اور وہ غیر قانونی طور پر امریکا میں آنے والے قریباً ایک کروڑ دس لاکھ غیرملکیوں کو بے دخل کرنے کا مطالبہ کررہے ہیں۔

وہ صدر منتخب ہونے کی صورت میں امریکا کی میکسکو جنوبی سرحد کے ساتھ ایک دیوار تعمیر کرنے کا بھی اعلان کرچکے ہیں اور ان کا کہنا ہے کہ وہ میکسیکو کو مجبور کریں گے کہ وہ اس کی تعمیری لاگت ادا کرے۔اس تناظر میں ان کی صدر پینا نائٹو سے ملاقات کے بارے میں کچھ کہنا قبل از وقت ہے کہ وہ اس میں کن امور پر تبادلہ کریں گے۔

مسٹر ٹرمپ بدھ کی شب فونیکس اریزونا میں ایک اہم تقریر بھی کرنے والے ہیں جس میں توقع ہے کہ وہ تارکین وطن کے بارے میں اپنی موقف کی وضاحت کریں گے۔