یقین کریں گے.. امریکی صدارتی امیدوار "حلب" کو نہیں جانتا !

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

کیا آپ یہ سوچ سکتے ہیں کہ امریکی صدارتی انتخابات کا امیدوار شام کے شہر حلب سے بے خبر ہو؟ جی ہاں صدارت کے لیے لبرل پارٹی کے امیدوار گیری جانسن کے ساتھ ایک ٹی وی انٹرویو میں حقیقت میں ایسا ہی ہوا۔

پروگرام کے پینل میں شریک ایک میزبان نے جب گیری سے سوال پوچھا کہ انتخابات میں کامیابی کی صورت میں وہ شام کے شہر حلب کی صورت حال سے نمٹنے کے لیے کیا کریں گے.. تو گیری نے پوری دنیا کو حیران کرتے ہوئے جواب دیا کہ "حلب.. حلب کیا ہے؟"

میزبان کے خواب و خیال میں بھی نہ تھا کہ خانہ جنگی سے دوچار شہر جو عالمی خبروں کی شہہ سرخیوں میں رہتا ہے ، صداتی امیدوار اس سے بے خبر ہو سکتا ہے۔ میزبان نے امیدوار سے پوچھا کہ آیا وہ مذاق تو نہیں کر رہے ہیں ، جس کی جونسن نے نفی کر دی۔ اس موقع پر پروگرام کے میزبان نے مداخلت کرتے ہوئے کہا کہ "حلب شام کا ایک شہر ہے جو اس وقت انسانی بحران اور آفت کا شکار ہے".. اس پر جونسن نے کہا "میں سمجھ گیا.. سمجھ گیا"۔

گیری جونسن امریکی لبرل پارٹی میں 2011 میں شامل ہوئے اور انہوں نے ریاست نیو میکسیکو کے گورنر کی ذمہ داری سنبھالی۔ وہ 2012 میں امریکی صدارتی انتخابات میں شریک ہوئے اور 1% ووٹ حاصل کیے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں