ترکی : عید کے پہلے روز مشرقی شہر میں کار بم دھماکا ،48 افراد زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ترکی کے مشرقی شہر وان میں سوموار کے روز حکمراں جماعت آق کے دفاتر کے نزدیک واقع ایک پولیس چیک پوائنٹ پر کار بم دھماکا ہوا ہے جس کے نتیجے میں اڑتالیس افراد زخمی ہوگئے ہیں۔

ترکی کی سرکاری خبررساں ایجنسی اناطولو نے مقامی گورنر کے بیان کے حوالے سے بتایا ہے کہ عیدالاضحیٰ کے پہلے روز بم دھماکے میں چھیالیس شہری اور دو پولیس افسر زخمی ہوئے ہیں۔

وان پولیس کے سربراہ صوت ایکجی نے قبل ازیں اناطولو کو بتایا کہ دو زخمیوں کی حالت تشویش ناک ہے لیکن یہ نہیں بتایا کہ آیا وہ شہری ہیں یا پولیس افسر۔

نجی خبررساں ایجنسی دوغان کی رپورٹ کے مطابق بارود سے بھری ایک گاڑی کو گورنر کے دفتر سے دو سو میٹر دور ایک تجارتی علاقے میں دھماکے سے اڑایا گیا ہے۔اسی علاقے میں آق پارٹی کے میونسپل دفاتر واقع ہیں۔

واضح رہے کہ ترکی میں حالیہ مہینوں کے دوران کرد باغیوں کی جماعت کردستان ورکرز پارٹی ( پی کے کے) اور داعش گروپ کے جنگجوؤں نے متعدد بم دھماکے کیے ہیں جن کے نتیجے میں بیسیوں ترک شہری ہلاک اور سیکڑوں زخمی ہوچکے ہیں۔ترکی اور اس کے مغربی اتحادیوں نے پی کے کے کو ایک دہشت گرد گروپ قرار دے رکھا ہے۔

ترکی کے مشرقی علاقے میں اس بم دھماکے سے ایک روز قبل ہی انقرہ حکومت نے اٹھائیس منتخب میئروں کو ہٹا کر ان کی جگہ نئے لوگ مقرر کیے ہیں۔ان میں سے زیادہ تر کو کرد اکثریتی مشرقی علاقے میں تبدیل کیا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں