.

نیویارک بم دھماکوں میں ملوث افغان نژاد امریکی گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی حکام نے گذشتہ روز ایک مشتبہ افغان نژاد شدت پسند کو حراست میں لیا گیا ہے جسے چند روز قبل نیویارک میں ہونے والے بم دھماکوں میں ملوث قرار دیا گیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق امریکی ریاست نیوجرسی کے میئر اور پولیس حکام کا کہنا ہے کہ حکام نے نیویارک میں ہونے والے بم دھماکوں میں مطلوب مشتبہ شخص احمد خان رحامی کو پولیس نے حراست میں لے لیا ہے۔ احمد خان رحامی کو نیو جرسی میں لنڈن شہر میں ایک پولیس اہلکار پر فائرنگ کے بعد حراست میں لیا گیا ہے۔ فائرنگ کے تبادلے میں ایک پولیس اہلکار زخمی ہوا جب کہ خان رحامی کو بھی دائیں بازو پر گولی کے زخم آئے ہیں۔

اس سے قبل امریکی حکام کی جانب سے نیو یارک میں اختتامِ ہفتہ پر ہونے والے تین دھماکوں کی تفتیش کے سلسلے میں ایک مشتبہ شخص کی شناخت کی تھی۔

حراست میں لیے گئے مشتبہ شخص 28 سالہ احمد خان رحامی ہیں جو افغان نژاد امریکی شہری ہیں۔ نیویارک پولیس ڈیپارٹمنٹ نے ان کی تصویر بھی جاری کی تھی۔

ادھر دوسری جانب نیویارک کے گورنر نے ایک بیان میں کہا ہے کہ مینھٹن دھماکے دہشت گردی کی کارروائی تھی۔ گورنر کا کہنا ہے کہ مینھٹن کے مقام پر ہونے والے دھماکے دہشت گردی تھی اور اس کے ڈانڈے بیرون مل رہے ہیں۔

خیال رہے کہ ہفتے کے روز نیویارک میں مینھٹن کے مقام پر تین بم دھماکے ہوئے تھے جن میں کم سے کم 29 افراد زخمی ہوگئے تھے۔امریکی پولیس نے ابتدائی تحقیقات میں کہا تھا کہ وہ اس واقعے کو دہشت گردانہ کارروائی قرار دینے کی تصدیق نہیں کرسکتے۔ بعد ازاں ایک مشتبہ ملزم کی تصویر جاری کی گئی تھی جسے کل نیوجرسی میں ایک بار کے سامنے سے حراست میں لیا گیا۔