.

حدیدہ کے صدارتی محل میں حوثی قیادت پر اتحادیوں کے حملے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے مغربی شہر الحدیدہ سے موصولہ اطلاعات میں بتایا گیا ہے کہ عرب اتحادی فوج میں شامل لڑاکا طیاروں نے شہر کے صدارتی محل میں حوثیوں کے ایک اجلاس پر بمباری کی جس کے نتیجے میں حوثی باغیوں اور ان کے اہم راہنماؤں کے ہلاک و زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں۔

آخری اطلاعات آنے ہلاک اور زخمی باغیوں کی حتمی تعداد معلوم نہیں ہو سکی۔ اتحادی طیاروں نے الحدیدہ ہی میں واقع سیکیورٹی ہیڈکوارٹر کو بھی بمباری کا نشانہ بنایا۔

درایں اثنا ورلڈ ہیلتھ ارگنائزیشن نے بتایا کہ یمن میں کام کرنے والے تنظیم کے نمائندوں نے ابتک یمن میں چالیس ہزار افراد کے ہلاک و زخمی ہونے کا ریکارڈ جمع کیا ہے۔ ایک بیان میں ڈبلیو ایچ او نے بتایا یہ تعداد مارچ 2015 سے ابتک ہلاک ہونے والوں کی ہے، تاہم بیان میں خدشہ ظاہر کیا گیا ہے کہ یمن کی خانہ جنگی میں ہلاکتوں کی حقیقی تعداد اس سے کہیں زیادہ ہے۔