.

مصری وکیل اور آسٹریلوی مفتی کے درمیان ’آن ایئر’ لڑائی!

وکیل کا آسٹریلوی عالم دین پر جوتوں سے حملہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصرکے ایک مقامی ٹی وی چینل کے ناظرین کو اس وقت پریشان کن صورت حال کا سامنا کرنا پڑا جب ایک ٹاک شو میں شریک آسٹریلوی عالم دین مفتی اعظم اور ایک مصری وکیل کسی بات پر ایک دوسرے سے ایسے الجھے کہ ایک دوسرے پر جوتوں، لاتوں اور گھونسوں کی نوبت آگئی۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق ٹی وی پروگرام میں آسٹریلوی مفتی مصطفیٰ راشد اور مصری وکیل نبیہ الوحش شریک گفت و گو تھے۔ مفتی راشد نے کوئی بات کہی جس پرالوحش مشتعل ہوگئے اور ان کی بات کو توہین آمیز قرار دے کربرا بھلا کہنے لگے۔ پروگرام کے میزبان نے دونوں مہمانوں کو ٹھنڈا کرنے کی کوشش کی۔ وکیل نبیہ الوحش اپنی کرسی پربیٹھنے کے بعد دوبارہ اٹھ کھڑے ہوئے اور پاؤں سے جوتا اتار کر مفتی کو مارنے لگے۔ جواب میں مفتی صاحب نے بھی لاتوں اور گھونسوں سے مصری وکیل کی تواضع کی۔ میزبان کی جانب سے مہمانوں میں مفاہمت کی تمام کوششیں رائیگاں گئیں اور آخر کار اسٹوڈیو میں موجود دوسرے افراد کو بلانا پڑا۔

خیال رہے کہ آسٹریلوی مفتی سے الجھنے والے مصری وکیل نبیہ الوحش پہلے بھی ایک متنازع شخصیت سمجھے جاتے ہیں۔ انہوں نے متعدد وکلاء اور فن کاروں کے خلاف بھی عدالتوں میں مقدمات قائم کررکھے ہیں۔