.

امریکا: تیز رفتار ٹرین اسٹیشن سے جا ٹکرائی ، 3 افراد ہلاک ،100 زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکا کی ریاست نیو جرسی میں مسافروں سے کھچا کھچ بھری ٹرین ایک اسٹیشن سے جا ٹکرائی ہے جس کے نتیجے میں تین افراد ہلاک اور ایک سو سے زیادہ زخمی ہوگئے ہیں۔ان میں بعض کی حالت تشویش ناک بتائی جاتی ہے۔

نیو جرسی کے ٹرانزٹ حکام کے مطابق جمعرات کی صبح کے مصروف اوقات میں پونے نو بجے قریب یہ حادثہ ہوبوکین کے اسٹیشن پر پیش آیا ہے جہاں مسافر َٹرین رکنے کے بجائے ٹریک کے آخر میں لگے بلاکوں پر چڑھ دوڑی اور پھر چند میٹر کے فاصلے پر واقع ایک دیوار سے جا ٹکرائی۔

این بی سی اور سی بی سی نے اس حادثے میں تین ہلاکتوں کی اطلاع دی ہے لیکن سرکاری طور پر ہلاکتوں کے کوئی اعداد وشمار جاری نہیں کیے گئے ہیں۔البتہ نیو جرسی ٹرانزٹ کی خاتون ترجمان جینیفر نیلسن نے بتایا ہے کہ حادثے میں ایک سو افراد زخمی ہوئے ہیں اور ان میں سے بعض کو مختلف زخم آئے ہیں۔ان کا مزید کہنا ہے کہ حادثے کے وقت ٹرین میں قریباً ڈھائی سو مسافر سوار تھے۔

فوری طور پر یہ معلوم نہیں ہوسکا ہے کہ ٹرین جب اسٹیشن میں داخل ہوئی تو اس وقت اس کی رفتار خلاف معمول کیوں تیز تھی۔ترجمان نے صحافیوں کو مزید بتایا ہے کہ حادثے کی تحقیقات شروع کردی گئی ہے اور اس کی تمام ممکنہ وجوہ کا جائزہ لیا جارہا ہے۔

ٹرانزٹ ٹرین سسٹم کے ایک ملازم مائیکل لارسن نے سی این این کو بتایا ہے کہ ٹرین اسٹیشن پر لگے بمپرز سے اس شدت سے ٹکرائی تھی کہ اس سے بم پھٹنے جیسا دھماکا ہوا۔اس سے اسٹیشن کی عمارت کو شدید نقصان پہنچا ہے اور اس کا ایک حصہ منہدم ہوگیا ہے۔

سوشل میڈیا پر حادثے کے بعد پوسٹ کی گئی ویڈیو اور تصاویر میں ٹرین تاروں میں الجھی ہوئی نظر آرہی ہے اور اس پر چھت کے حصے بھی گرے ہوئے ہیں۔

نیو جرسی ٹرانزٹ نے ایک بیان میں بتایا ہے کہ ٹرین نمبر 1614 سپرنگ ویلی سے آرہی تھی اور یہ تیز رفتاری کی وجہ سے دریائے ہڈسن پر پل کے اس پار واقع ہوبوکین ٹرمینل کی عمارت سے جا ٹکرائی۔ حادثے کے بعد اس اسٹیشن سے تمام خدمات معطل کردی گئی ہیں۔