شام جانے کی کوشش کرنے والے دو سعودی یمن سے گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

یمنی فوج نے سعودی عرب کے دو شدت پسندوں کو گرفتار کرکے سعودی حکام کے حوالے کر دیا ہے جن کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی شروع کر دی گئی ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق گرفتار کیے گئے دونوں سعودی باشندوں کو ماضی میں متعدد مرتبہ حراست میں لیا گیا تھا اور ان کے بیرون ملک سفر پر بھی پابندی عاید تھی مگر وہ سوڈان کے جعلی پاسپورٹس پر یمن داخل ہوئے ہوئے اور وہاں سے ترکی کے راستے شام جانے کی منصوبہ بندی کر رہے تھے کہ انہیں پکڑ لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق گرفتار کیے گئے دونوں شدت پسندوں نے پہلے بحرین کا جعلی پاسپورٹ حاصل کرنے کی کوشش کی تھی۔ بحرینی پاسپورٹ کے حصول کے لیے انہیں ابو جہاد نامی ایک شامی شدت پسند کی طرف سے معاونت فراہم کی گئی تھی مگرشاہ فہد پل پر پکڑے جانے کے بعد انہیں دوبارہ سعودی عرب بھیج دیا گیا تھا۔ سعودی عرب میں گرفتار رہنے کے بعد انہیں رہا کردیا گیا مگر وہ باز نہ آئے اور ایک دوسرے شدت پسند ابو علی کی مدد سے سوڈان کا جعلی پاسپورٹ تیار کرا لیا۔

سعودی حکام نے دونوں شہریوں کو شام میں جنگجو گروپوں میں شمولیت کے لیے بیرون ملک سفر سے روکنے کی متعدد بار کوششیں کی گئیں مگر وہ باز نہیں آئے۔ گرفتار کیے گئے دونوں شدت پسندوں کے خلاف فرد جرم تیار کی جا رہی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں