.

ڈنمارک میں فریزر سے تین شامی مہاجرین کی لاشیں برآمد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ڈنمارک کے جنوبی علاقے سے ایک اپارٹمنٹ میں فریزر سے ایک ستائیس سالہ شامی عورت اور اس کی دو بیٹیوں کی لاشیں ملی ہیں۔ ان دونوں بچیوں کی عمریں نو اور سات سال تھیں۔

ڈینش پولیس نے بتایا ہے کہ اس نے اتوار کو جنوبی قصبے آبینرآ سے یہ تینوں لاشیں برآمد کی ہیں۔پولیس کو اس شامی خاتون کے ایک رشتے دار نے اطلاع دی تھی کہ اس کا گذشتہ چند روز سے ان سے رابطہ نہیں ہو پارہا ہے۔اس کے بعد ان کے اپارٹمنٹ کی تلاشی لی گئی تھی۔

تفتیش کاروں کا کہنا ہے کہ ان تینوں کو قتل کیا گیا تھا لیکن انھوں نے اس کی کوئی مزید تفصیل نہیں بتائی ہے۔مقتولہ عورت کا خاوند اپارٹمنٹ میں موجود نہیں تھا اور اب پولیس اس کی تلاش میں ہے۔یہ شامی خاندان 2015ء میں ڈنمارک منتقل ہوا تھا اور اس کو مہاجر کا درجہ دیا گیا تھا۔