.

سعودی اتحاد کے حوثیوں کے ٹھکانوں اور اسلحہ ڈپوؤں پر حملے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی قیادت میں اتحاد کے لڑاکا طیاروں نے یمن کے دو صوبوں حجہ اور صنعا میں ایران کے حمایت یافتہ حوثی شیعہ باغیوں کے فوجی ٹھکانوں کو فضائی حملوں میں نشانہ بنایا ہے جس سے انھیں بھاری جانی اور مالی نقصان اٹھانا پڑا ہے۔

شمال مغربی صوبے حجہ کے ضلع حرض میں اتحادی طیاروں نے حوثیوں کی میزائل چلانے کی جگہ کو نشانہ بنایا ہے۔ اتحادی طیاروں نے دارالحکومت صنعا کے مغرب میں حوثیوں کے بیلسٹک میزائلوں کے ایک لانچ پیڈ پر بھی بمباری کی ہے۔ان حملوں میں متعدد حوثی باغی ہلاک ہوگئے ہیں۔

عسکری ذرائع نے بتایا ہے کہ اتحادی طیاروں نے منگل کے روز صنعا کے مغرب میں واقع علاقے بنی مطر میں اسلحے کے ڈپوؤں کو نشانہ بنایا ہے اور شہر کے مشرق میں واقع علاقے جبل نقم میں اسلحہ ڈپوؤں اور الحقہ کے فو جی کیمپ پر بمباری کی ہے۔

درایں اثناء اتحادی طیاروں نے صنعا سے بیس کلومیٹر مشرق میں واقع مآرب شہر کے علاقے صرواح حوثی ملیشیا کے اسلحہ ڈپو پر حملے جاری رکھے ہوئے ہیں۔

سعودی عرب کی سرحد کے ساتھ واقع شمالی صوبے الجوف اور ساحلی صوبے الحدیدہ میں بھی اتحادی طیاروں نے حوثی ملیشیا کے فوجی ٹھکانوں کو فضائی بمباری میں ہدف بنایا ہے۔ فوری طور پر ان حملوں میں ہونے والے جانی نقصان کی تفصیل نہیں بتائی گئی ہے۔