.

افغانستان: جرمن قونصل خانے پر خودکش حملہ، متعدد ہلاک وزخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

افغانستان کے شمالی شہر مزار شریف میں قائم جرمن قونصل خانے پر جمعرات کے روز کیےگئے ایک کار خود کش بم حملے میں کم سے کم دو افراد ہلاک اور 60 زخمی ہوگئے ہیں۔

ایک مقامی صحافی بلال سارواری نے مائیکرو بلاگنگ ویب سائیٹ "ٹویٹر" پر اپنے ایک بیان میں بتایا کہ جرمن قونصل خانے پر بارود سے بھری کار کے ذریعے کیے گئے حملے کے نتیجے میں کم سے کم دو افراد ہلاک اور 60 زخمی ہوئے ہیں۔ اسپتال ذرائع کے مطابق زخمیوں میں سے بعض کی حالت تشویشناک ہے۔

ادھر جرمنی کی مشترکہ فورسز کے ترجمان نے بوسٹڈام میں ایک بیان میں بتایا کہ یہ دھماکہ مقامی وقت کے مطابق 23:05 پر ہوا۔ دھماکے کے بعد فائرنگ بھی کی گئی۔

جرمن ریڈیو کے مطابق مزار شریف میں جرمنی کے قونصل خانے پر خودکش حملے کی ذمہ داری طالبان نے قبول کی ہے اور کہا ہے کہ یہ حملہ شمالی شہ قندوز میں نیٹو فورسز کی بمباری میں عام شہریوں کے قتل کا بدلہ ہے۔

ترجمان کا کہنا ہے کہ دھماکہ کے بعد امدادی ٹیمی جائے وقوعہ کی طرف روانہ کردی گئی تھیں۔ تمام زخمیوں کو اسپتالوں میں منتقل کردیا گیا ہے۔جرمن وزارت خارجہ کی طرف سے اس حملے پر کوئی فوری رد عمل سامنے نہیں آیا ہے۔