.

سعودی عرب : جاسوسی کے الزام میں دو اور ایرانی گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں حال ہی میں سکیورٹی فورسز نے دو اور ایرانیوں کو دہشت گردی اور ریاست مخالف سرگرمیوں میں ملوّث ہونے کے الزام میں گرفتار کر لیا ہے۔

ان دو مشتبہ افراد کی گرفتاری کے بعد سعودی عرب میں پکڑے گئے ایرانیوں کی تعداد چھے ہوگئی ہے۔ان میں ایک کو مقدمے میں سزا سنائی جا چکی ہے لیکن اس نے فیصلے کے خلاف ایک اعلیٰ عدالت میں اپیل کررکھی ہے۔

ان میں ایک مشتبہ ایرانی شخص سے سعودی عرب کا ادارہ برائے تحقیقات اور پبلک پراسیکیوشن تحقیقات کررہا ہے اور اس کے خلاف کیس دائر کردیا گیا ہے۔چار دوسرے مشتبہ افراد کے خلاف ابھی تفتیش جاری ہے۔

سعودی سکیورٹی فورسز نے اس سال کے آغاز کے بعد سے 30 شامیوں کو دہشت گردی کی سرگرمیوں میں ملوث ہونے کے الزامات میں گرفتار کیا ہے اور اس وقت کل 214 مشتبہ شامی افراد انٹیلی جنس کی جیلوں میں زیر حراست ہیں۔

حال ہی میں 15 یمنیوں کو گرفتار کیا گیا ہے اور ان کے بعد سعودی جیلوں میں قید مشتبہ یمنیوں کی تعداد 352 ہوگئی ہے۔ 10 پاکستانیوں کو بھی دہشت گردی کی سرگرمیوں میں ملوث ہونے کے الزام میں پکڑا گیا ہے اور ان کو ملا کر اس وقت 62 پاکستانی سنگین جرائم میں ملوّث ہونے کے الزامات میں سعودی جیلوں میں قید ہیں۔

سعودی عرب میں قبل ازیں گذشتہ سال ایران کے لیے جاسوس کے الزام میں بتیس مشتبہ افراد کو گرفتار کیا گیا تھا۔ ان میں سے ایک حج کی سکیورٹی پر مامور رہا تھا۔ان سب کے خلاف دارالحکومت الریاض میں قائم ایک فوجداری عدالت میں مقدمہ زیر سماعت رہا ہے اور ان میں سے بعض کو لمبی قید کی سزائیں سنائی جاچکی ہیں۔