.

لیبیا:داعش کے ٹھکانے سے 266 جنگجوؤں کی لاشیں برآمد

داعش کے چنگل دسیوں شہری بازیاب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لیبیا میں اتحادی حکومت کی سیکیورٹی فورسز نے امدادی ادارے ہلال احمر کے کارکنان کی معاونت سے ساحلی علاقے الجیزہ میں شدت پسند گروپ ’داعش‘ کے آخری ٹھکانے سے 266 شدت پسند جنگجوؤں کی لاشیں برآمد کی ہیں۔ ان جنگجوؤں کو لیبی فورسز نے حالیہ ایام میں ’بنیان المرصوص‘ آپریشن کے دوران ہلاک کیا تھا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق ’بنیان المرصوص‘ میڈیا سینٹر کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں بتایا گیا ہے کہ جمعرات کو ساحلی الجیزہ کالونی سے داعش کے آخری ٹھکانے کو بھی کلیر کرا لیا گیا ہے۔ اس دوران فورسز نے ہلال احمر کے کارکنان کی معاونت سے داعش کے 230 جنگجوؤں کی لاشیں برآمد کی گئیں جب کہ گذشتہ روز مجموعی طور پر داعشی جنگجوؤں کی 266 لاشیں قبضے میں لی گئی ہیں۔

میڈیا سینٹر نے سیکیورٹی فورسز نے داعش کے ہاتھوں یرغمال شہریوں کو چھڑانے کا بھی اعلان کیا گیا ہے۔الجیزہ کالونی میں داعش کے ہاتھوں یرغمال شہریوں کی بازیابی کی تصاویر بھی شائع کی گئی ہیں۔ داعش کے چنگل سے چھڑائے گئے شہریوں میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں۔ ان میں سے بعض یرغمالیوں کا تعلق افریقی ملکوں سے بتایا جاتا ہے۔