.

ایرانی عہدہ داروں کے خلیجی ممالک کے خلاف دھمکی آمیز بیانات مسترد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

خلیج تعاون کونسل ( جی سی سی) نے بعض ایرانی عہدہ داروں کے تنظیم اور خطے کے دوسرے ممالک کے خلاف حالیہ دھمکی آمیز بیانات کو مسترد کردیا ہے اور انھیں سفارتی آداب کے منافی قرار دیا ہے۔

جی سی سی کے سیکریٹری جنرل عبداللطیف الزیانی نے اتوار کو جاری کردہ ایک بیان میں کہا ہے کہ ایرانی عہدہ داروں کی دھمکیاں اقوام متحدہ کے منشور کے تحت اچھے ہمسائیگی اور دوسرے ممالک کے داخلی امور میں مداخلت کے اصولوں کے منافی ہیں۔

انھوں نے مزید کہا ہے کہ ایران نے سعودی عرب ،بحرین ،قطر اور یمن سمیت جی سی سی اور خطے کے دوسرے ملکوں میں مداخلت جاری رکھی ہوئی ہے۔

سیکریٹری جنرل نے کہا کہ ایران کے اقدامات اس کے جارحانہ موقف اور خطے کے ممالک کے داخلی امور میں مداخلت جاری رکھنے کی پالیسی کے عکاس ہیں۔ وہ خطے کی سلامتی اور استحکام کو بھی نقصان پہنچا رہا ہے۔

انھوں نے ایران سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ دوسرے ممالک کے خلاف اپنی منفی پالیسی پر نظرثانی کرے۔انھوں نے عالمی برادری پر بھی زوردیا ہے کہ وہ ایران کو خطے کے امن اور سلامتی کو نقصان پہنچانے سے روکے۔