.

سعودی عرب :شامی بھائیوں کے لیے ایک دن میں سوا 14 کروڑ ریال جمع

شاہ سلمان کا شامی مہاجرین کے لیے 2 کروڑ اور ولی عہد شہزادہ محمد بن نایف کا 1 کروڑ ریال کا عطیہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں ایک دن میں شامی عوام کی امداد کے لیے چودہ کروڑ اکتیس لاکھ ریال سے زیادہ کے عطیات جمع ہوگئے ہیں۔سعودی شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے منگل کے روز شامی مہاجرین کی امداد کے لیے شہریوں سے دس کروڑ ریال عطیات جمع کرنے کی اپیل کی تھی۔

شاہ سلمان نے اس مہم کے لیے اپنی جیب سے دو کروڑ ریال کا عطیہ دیا ہے ۔ولی عہد شہزادہ محمد بن نایف نے ایک کروڑ اور نائب ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے اسی لاکھ ریال شامی بھائیوں کی امداد کے لیے عطیہ کیے ہیں۔

شاہ سلمان انسانی امداد اور ریلیف مرکز کے نگران اعلیٰ ڈاکٹر عبداللہ الربیعہ نے بتایا ہے کہ ''صرف نقدی کی شکل میں عطیات اکٹھے کیے جارہے ہیں اور ہم دیگر اشیاء کی صورت میں امدادی سامان جمع نہیں کررہے ہیں،کیونکہ سعودی عرب اور شام کے درمیان کافی فاصلہ حائل ہے اور وہ سامان پہنچانا مشکل ہوگا''۔

انھوں نے مزید بتایا ہے کہ ان عطیات کی شامی مہاجرین میں تقسیم کے لیے متعلقہ اداروں اور فریقوں سے رابطہ کیا جارہا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ مختصر وقت میں اتنی بھاری رقوم کا جمع ہونا سعودی عوام کی انسانیت نوازی اور مسلم بھائیوں کے ساتھ مصیبت کی گھڑی میں کھڑا ہونے کے ہمدردانہ رویے کا بھی مظہر ہے۔

ان کے بہ قول شامی ریلیف کے ساتھ مل کر شروع کی گئی یہ مہم تین روز تک جاری رہے گی۔یہ مہم سعودی مملکت کے شامی مہاجرین کے انسانی امدادی پروگرام کا حصہ ہے اور اس سے شدید سردی کے اس موسم میں شامی مہاجرین کی مشکلات میں کمی لانے میں مدد ملے گی۔