.

اسرائیلی ٹی وی پر ایم بی سی کی اجازت کے بغیر مصری ڈراما نشر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسرائیل کے سرکاری ٹیلی ویژن نے ایک مقبول مصری ڈرامے کو پان عرب نشریاتی ادارے ایم بی سی کی اجازت کے بغیر نشر کرنا شروع کر دیا ہے۔ ایم بی سی کو اس ڈرامے کے خصوصی ملکیتی حقوق حاصل ہیں۔

العربیہ نیوز چینل کی مادر کمپنی ایم بی سی نے اسرائیلی ٹی وی پر ڈراما الاسطورہ (معنیٰ لیجنڈ) نشر کرنے کی حرکت کو سرقہ قرار دیا ہے۔اسرائیلی ٹی وی جعل سازی کرتے ہوئے ایم بی سی کو کسی قسم کی فیس ادا کیے بغیر یہ ڈراما نشر کررہا ہے۔

اسرائیل کے سرکاری ٹیلی ویژن نے اس سیریز کو چینل 33 پر ہر ہفتے اتوار سے جمعرات تک نشر کرنے کا اعلان کیا ہے اور ہر روز عبرانی زبان میں سب ٹائٹل کے ساتھ اس کی دو اقساط نشر کی جائیں گی۔

الاسطورہ گذشتہ سال رمضان میں عرب دنیا میں دیکھا جانے والا سب سے مقبول ڈراما تھا۔اس میں دو بھائیوں کی کہانی بیان کی گئی ہے جو جرائم کی دنیا میں داخل ہوجاتے ہیں۔وہ گینگ کے تنازعات میں الجھ جاتے ہیں اور پھر ان کے درمیان ایک سخت مگر ہلاکت آفریں خاندانی جدوجہد شروع ہوجاتی ہے۔

واضح رہے کہ اسرائیل کے چینل 33 نے 1993ء میں اپنی نشریات کا آغاز کیا تھا۔اس پر عربی ،عبرانی اور انگریزی زبانوں میں پروگرام نشر کیے جاتے ہیں۔