.

ٹیکساس کے پراسیکیوٹر پناہ گزینوں بارے ٹرمپ کے اقدامات کے حامی

ڈونلڈ ٹرمپ کے فیصلے ملک و قوم کے مفاد میں ہیں: پاکسٹون

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی ریاست ٹیکساس نے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی طرف سے سات مسلم اکثریتی ملکوں کے باشندوں اور پناہ گزینوں کے امریکا میں داخلے کے فیصلے کی پر زور حمایت کی ہے۔ ٹیکساس کے پراسیکیوٹر جنرل نے وفاقی اپیل کورٹ کے سامنے بیان دیتے ہوئے صدر ٹرمپ کے اقدامات کی حمایت کی اور ان اقدامات کو ملک وقوم کے مفاد میں قرار دیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق ریاست ٹیکساس کے پراسیکیوٹر جنرل کین پاکسٹون نے بدھ کو اپیل کورٹ میں کہا کہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے پناہ گزینوں کی روک تھام کے لیے جو فیصلہ کیا ہے وہ قانون دائرہ اختیار کے اندر اور ملک و قوم کے مفاد میں ہے۔

پاکسٹون نے عدالت پر زور دیا کہ وہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی طرف سے سات مسلمان ملکوں کے باشندوں کی عارضی طور پر امریکا میں داخلے پر لگائی گئی پابندی کی توثیق کرے تاکہ صدارتی آرڈر کو نافذ کیا جاسکے۔

خیال رہے کہ ریاست ٹیکساس امریکا کی پہلی ریاست ہےجو شدت کے ساتھ صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے فیصلوں کی حامی ہے۔ امریکا کی 15ریاستوں نے پناہ گزینوں کے حوالے سے 27 جنوری کو جاری کردہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ایگزیکٹو آرڈر کو عدالت میں چیلنج کرتے ہوئے صدارتی فیصلوں کو ملک کے تعلیمی اور اقتصادی اداروں کے لیے نہایت نقصان دہ قرار دیا تھا۔