آسکر 2017: بہترین غیر ملکی فلم کا ایوارڈ ایرانی فلم کے نام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

رواں برس 2017 کے لیے ایرانی فلم "The Salesman" نے بہترین غیر ملکی زبان کی فلم کا آسکر ایوارڈ جیت لیا۔ فلم کے ہدایت کار اصغر فرہادی نے اتوار کی شام ہالی وُڈ میں منعقد ہونے والی اس تقریب کا بائیکاٹ کیا۔ فرہادی کا یہ بائیکاٹ ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے بعض ممالک کے شہریوں پر امریکا میں داخلے پر عائد پابندی کے خلاف احتجاج کے طور پر تھا۔

فرہادی اس سے قبل 2012 میں اپنی فلم "Seperation" پر بہترین غیرملکی فلم کا آسکر ایوارڈ حاصل کر چکے ہیں۔ اس مرتبہ ایرانی ہدایت کار نے لندن کے Trafalgar Square پر ہزاروں افراد کے لیے اپنی فلم "دی سیلز مین" کی مفت نمائش کی۔

تقریب میں ایرانی نژاد امریکی خاتون انجینئر اور خلا باز انوشہ انصاری نے اصغر فرہادی کی طرف سے ایوارڈ وصول کیا۔ اس موقع پر انوشہ کی جانب سے پڑھے جانے والے بیان میں کہا گیا کہ امریکا اور "امریکا کے دشمنوں" کے نام سے دنیا کی تقسیم خوف پیدا کر رہی ہے اور یہ جنگ اور جارحیت کے واسطے ایک پُرفریب جواز ہے۔ بیان میں مزید کہا گیا کہ یہ جنگیں جارحیت کا نشانہ بننے والے ممالک میں جمہوریت کے قیام اور انسانی حقوق کی راہ میں حائل ہو رہی ہیں۔

ڈونلڈ ٹرمپ نے صدارت کا منصب سنبھالنے کے بعد ایران سمیت سال مسلم ممالک کے شہریوں پر امریکا میں داخلے پر پابندی عائد کر دی تھی۔ اس کے نتیجے میں وسیع پیمانے پر احتجاج اور مظاہرے دیکھنے میں آئے۔ بعد ازاں امریکی عدالتوں نے صدارتی فیصلے پر عمل درامد کو معطل کر دیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں