.

افغان طالبان نے کابل میں حملوں کی ذمے داری قبول کر لی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

افغان طالبان نے دارالحکومت کابل میں بدھ کے روز پولیس ،فوج اور انٹیلی جنس کے اہداف پر حملوں کی ذمے داری قبول کر لی ہے۔سکیورٹی حکام نے شہر میں دو مقامات پر طالبان جنگجوؤں کے حملوں کی تصدیق کی ہے۔

انھوں نے بتایا ہے کہ حملہ آوروں نے کابل کے نواح میں افغان انٹیلی جنس کے ایک دفتر کو نشانہ بنایا ہے۔انھوں نے شہر کے مغربی حصے میں نامعلوم مسلح افراد اور سکیورٹی فورسز کے درمیان فائرنگ کے تبادلے کی بھی اطلاع دی ہے۔اس جگہ بم کے دھماکے کی زور دار آواز بھی سنی گئی ہے۔

ضلعی پولیس کے ہیڈکوارٹرز کے نزدیک بھی افغان سکیورٹی فورسز اور جنگجوؤں کے درمیان لڑائی کی اطلاعات ملی ہیں۔ یہ عمارت فوج کے ایک تربیتی اسکول کے نزدیک واقع ہے۔فوری طور پر پولیس کی جانب سے اس حملے کے حوالے سے کوئی سرکاری بیان جاری نہیں کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ گذشتہ ماہ کابل میں عدالت عظمیٰ کی عمارت کے باہر خودکش بم دھماکے میں کم سے کم بیس افراد ہلاک ہوگئے تھے۔داعش نے اس حملے کی ذمے داری قبول کی تھی۔