.

ہم حوثیوں کو یمن کی حزب اللہ نہیں بننے دیں گے: جنرل عسیری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں آئینی حکومت کی بحالی کے لئے سرگرم اتحاد کے ترجمان میجر جنرل احمد عسیری کا کہنا ہے کہ یمن میں عرب اتحاد نے آپریشن کے شروع ہی سے دو نتائج حاصل کرنے کے لئے کام کیا ہے۔

ان میں پہلا مقصد یمن میں باغی ملییشیائوں کا اثر ورسوخ اور صلاحیتوں کو ختم کرنا تھا جب کہ دوسرا مقصد یمن کے اندر فوجی اسٹیبلشمنٹ قائم کرنا ہے جس کی مدد سے یمن میں انتہاپسندی کے خاتمے میں مدد ملے گی۔ جنرل عسیری کا کہنا تھا کہ عرب اتحاد حوثی ملیشیاءئوں کو لبنان کی حزب اللہ کی طرح نہیں بننے دیں گے۔

جنرل عسیری نے پیرس میں ایک سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ یمن مں فوجی آپریشنز شہریوں کی حفاظت کے لئے انتہائی احتیاط سے مکمل کئے جارہے ہیں۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ حوثی ملیشیائوں نے شہریوں کے درمیان کمانڈ اینڈ کنٹرول سنٹر قائم کر رکھے ہیں۔

احمد عسیری کا کہنا تھا کہ یمن کی آئینی حکومت کی وفادار فورسز کی جانب سے پیش قدمی جاری ہے اور سیاسی قیادت بھی عدن میں رہائش پذیر ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ عرب اتحاد القاعدہ کو شکست دینے کے لئے یمنی فورسز کی مدد کررہا ہے۔