.

یمن : عرب اتحاد کے حملوں میں صالح اور حوثی ملیشیا کے 10 جنگجو ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں جمعرات کے روز عرب اتحاد کے فضائی حملوں اور سرکاری فوج کے ساتھ جھڑپوں میں حوثی ملیشیا اور معزول صدر علی عبداللہ صالح کی وفادار فورسز کے دو کمانڈروں سمیت دس جنگجو ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے ہیں۔

اطلاعات کے مطابق تعز کے شمال مغرب میں واقع المخا میں معسکر خالد بن الولید پر فضائی بمباری کی گئی ہے۔اس میں حوثی ملیشیا کا ایک بھرتی کنندہ کمانڈر غیلان عاطف بھی ہلاک ہوگیا ہے۔اس پر متعدد جنگجوؤں کو حکومتی فورسز کے خلاف لڑائی کے لیے بھرتی کرنے کا الزام تھا۔

یمن کی قانونی حکومت نے عاطف پر بہت سے جرائم ،خلاف ورزیوں اور اغوا کی وارداتوں میں ملوث ہونے کا الزام عاید کیا تھا۔ قبل ازیں المخا کے محاذ پر نیشنل گارڈز کے ساتھ شدید لڑائی میں حوثی ملیشیا کے دو سینیر جنگجو ہلاک ہو گئے ہیں۔

ان میں سے ایک کی شناخت مرداس زخیم کے نام سے کی گئی ہے۔اس نے لبنان اور ایران میں عسکری تربیت حاصل کی تھی۔دوسرے ہلاک جنگجو کی شناخت فہد بطش شریف کے نام سے ہوئی ہے۔وہ بیہان ، شبوۃ اور یمن کے ساحلی علاقے میں حوثی ملیشیا کا معروف کمانڈر رہا تھا۔