.

جیمز میٹس کی نیٹو اتحادی ترکی کو امریکی حمایت کی یقین دہانی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکا کے وزیردفاع جیمز میٹس نے معاہدہ شمالی اوقیانوس کی تنظیم نیٹو کے اتحادی ترکی کو اپنے ملک کی جانب سے دفاع کے ضمن میں حمایت کی یقین دہانی کرائی ہے۔

جیمز میٹس نے لندن میں ترک وزیراعظم بن علی یلدرم سے صومالیہ کے بارے میں بین الاقوامی کانفرنس کے موقع پر کوئی نصف گھںٹے تک ملاقات کی ہے۔دونوں ملکوں میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے شام کے کرد جنگجوؤں کو مسلح کرنے کے اعلان کے بعد اعلیٰ سطح پر یہ پہلا براہ راست رابطہ ہے۔

ترک صدر رجب طیب ایردوآن نے بدھ کو ایک بیان میں امریکا سے مطالبہ کیا تھا کہ وہ شامی کرد جنگجوؤں کو مسلح کرنے کا فیصلہ فوری طور پر واپس لے۔انھوں اس امید کا اظہار کیا تھا کہ ’’ اس غلطی کو فوری طور پر ٹھیک کردیا جائے گا‘‘۔

ان کا کہنا تھا کہ کہ وہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے 16مئی کو اپنی ملاقات میں اس معاملے پر بات کریں گے اور انھیں ترکی کی تشویش سے آگاہ کریں گے۔واضح رہے کہ ترکی نے کرد پیپلز پروٹیکشن یونٹس (وائی پی جی) کو دہشت گرد تنظیم قرار دے رکھا ہے اور صدر طیب ایردوآن نے اس جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا تھا کہ وہ چاہتے ہیں کہ ترکی کے اتحادی ایک دہشت گرد تنظیم کے بجائے انقرہ کا ساتھ دیں۔