.

برطانیہ : 130 ائمہ کا لندن حملہ آوروں کی نمازِ جنازہ پڑھانے سے انکار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

برطانیہ میں 130 ائمہ کے ایک گروپ نے ہفتے کی شب لندن میں دہشت گرد کارروائی کرنے والے حملہ آوروں کی نمازِ جنازہ پڑھانے سے انکار کر دیا۔ شہر کے وسطی علاقے میں ہونے والی اس کارروائی میں 7 افراد ہلاک اور 48 زخمی ہو گئے تھے۔

برطانوی اخبار "دی اِنڈی پینڈنٹ" کے مطابق مذکورہ گروپ نے اپنے بیان میں کہا کہ "اخلاقیات کے بنیادی اصول ،جن کو اسلام کا جوہر شمار کیا جاتا ہے، ان کی روشنی میں ہم اس واقعے کا ارتکاب کرنے والوں کی نماز جنازہ ہر گز نہیں پڑھائیں گے"۔

دوسری جانب برطانوی پولیس نے پیر کے روز لندن حملے کے دو دہشت گردوں کی شناخت کا اعلان کر دیا۔ ہفتے کی شب برطانوی دارالحکومت میں 3 حملہ آوروں نے گاڑی سے کچلنے اور چاقو کے واروں کی کارروائی کی تھی۔

پولیس نے دو حملہ آوروں کی تصاویر دکھاتے ہوئے بتایا کہ لندن بِرج کے ایک حملہ آور کا نام خرم بٹ ہے جو پاکستانی نژاد ہے جب کہ دوسرا حملہ آور رشید رضوان مراکشی اور لیبیائی نژاد ہے۔

برطانیہ کی انسداد دہشت گردی پولیس کے سربراہ مارک راؤلی کا کہنا ہے کہ 27 سالہ خرم بٹ برطانوی شہری ہے اور وہ پاکستان میں پیدا ہوا۔ وہ پولیس اور داخلی انٹیلی جنس کے ادارے کے لیے معروف شخص ہے۔ راؤلی کے مطابق 30 سالہ مراکشی اور لیبیائی نژاد رضوان اس سے قبل معروف نہیں تھا۔