.

سعودی بیعت کمیٹی کے 34 میں سے 31 ارکان محمد بن سلمان کے حق میں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں ایک شاہی فرمان کے ذریعے بدھ کے روز شہزادہ محمد بن سلمان کو مملکت کا نیا ولی عہد مقرر کر دیا گیا۔ مملکت کی بیعت کمیٹی کے کُل 34 ارکان میں سے 31 نے محمد بن سلمان کے بطور ولی عہد چناؤ کے حق میں ووٹ دیا۔

سعودی خبر رساں ایجنسی SPA کے مطابق شاہی فرمان میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ "حکومت سے متعلق بنیادی نظام کے آرٹیکل پانچ کی شِق "ب" میں ترمیم کی جا رہی ہے۔ اس طرح حکم رانی مملکت کے بانی شاہ عبدالعزیز بن عبدالرحمن الفیصل آل سعود کے بیٹوں اور پوتوں کے ہاتھ میں رہے گی۔ ان میں اس شخصیت کی بیعت کی جائے گی جو قرآن و سنت کے مطابق حکومت کا زیادہ اہل ہو اور مملکت کے بانی کے بیٹوں کے بعد شاہ عبدالعزیز کی اولاد میں ایک ہی شاخ سے آئندہ بادشاہ اور ولی عہد نہیں ہوگا"۔

خادم حرمین شریفین نے نئے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کو بیعت کے لیے بدھ کے روز بعد نماز تراویح مکہ مکرمہ کے قصر صفا میں طلب کیا ہے۔