بائیکاٹ کرنے والے ممالک نے قطر سے مطالبات کی فہرست تیار کرلی: امریکا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکی وزیرخارجہ ریکس ٹیلرسن نے کہا ہے کہ قطر سے سفارتی تعلقات ختم کرنے والے عرب ممالک نے مطالبات کی ایک فہرست تیار کی ہے جسے جلد ہی دوحہ کے سامنے پیش کیا جائے گا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق امریکی وزیرخارجہ نے ایک بیان میں کہا کہ قطر کے سامنے پیش کی جانے والی مطالبات کی فہرست پر سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، بحرین اور مصر یکساں موقف رکھتے ہیں۔

ریکس ٹیلرسن کا کہنا ہے کہ خلیجی ممالک کی طرف سے تیار کی گئی فہرست میں ’معقول اور قابل عمل‘ مطالبات پیش کئے گئے ہیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ امریکا قطر اور دوسرے ملکوں کے درمیان مفاہمت کے لیے کویت کی ثالثی کی کوششوں کی تائید کرتا ہے۔ توقع ہے کہ ان کوششوں کا جلد ہی کوئی نتیجہ سامنے آجائے گا۔

قبل ازیں امریکی صدر نے قطر اور دوسرے خلیجی ملکوں کے درمیان پیدا ہونے والے تنازع پر بات کرتے ہوئے کہا تھا کہ قطر کو سزا دینے کا فیصلہ مثبت اقدام ہے۔ ان کا اشارہ پڑوسی ملکوں کی طرف سے دوحہ کے سفارتی بائیکاٹ کی جانب تھا جو قطر کی دہشت گردی کی حمایت کی بناء پر مسلمان اور عرب ممالک نے شروع کیا ہے۔

دو ہفتے پیشتر سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، بحرین اور مصر سمیت متعدد مسلمان اور عرب ممالک نے قطر پر دہشت گردی کی معاونت اورخطے میں عدم استحکام پھیلانے کی سازشوں کے الزامات کے بعد قطر کا سفارتی بائیکاٹ کردیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں