.

اتحادی فوج کا حوثیوں کے اجلاس پرحملہ، متعدد جنگجو ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اتوار کو عرب اتحادی فورسز نے مصدقہ انٹیلی جنس معلومات کی بنیاد پر یمن میں ایران نواز حوثی باغیوں کے ایک اجلاس پر حملہ کرکے متعدد جنگجوؤں کو ہلاک اور زخمی کیا ہے۔

’العربیہ‘ چینل کو ذرائع سے ملنے والی معلومات میں پتا چلا ہے کہ مآرب شہر میں حوثی باغیوں کے سرکردہ لیڈروں کا ایک اہم اجلاس جاری تھا۔ اتحادی فوج نے انٹیلی جنس معلومات کی بنیاد پر حساس نوعیت کی کارروائی کرکے کئی حوثی لیڈروں کو ہلاک کردیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ اتحادی فوج کے حملے کا نشانہ بننے والے سرکردہ حوثی لیڈروں میں باغیوں کی قائم کردہ سیاسی کونسل کے رکن مبارک المشن صرواح فرنٹ میں حوثیوں کے عہدیدار اور ایک دوسرے سرکردہ لیڈر ناصر الزعبلی شامل ہیں۔

قبل ازیں ہفتے کو یمن کے عسکری ذریعے نے بتایا تھا کہ مآرب میں اتحادی فوج کی بمباری اور توپخانے سے شدید گولہ باری کے جلو میں یمنی فوج نے پیش قدمی جاری رکھی ہوئی ہے۔

ذرائع کا کہنا تھا کہ اتحادی فوج کی حمایت یافتہ آئینی حکومت کی نمائندہ فورسز نے مآرب میں المخدرہ اور شمال مغربی محاذ کے صراوح بازار سے متصل پہاڑی سلسلے سمیت کئی تزویراتی اہمیت کے حامل مقامات کا کنٹرول سنبھال لیا ہے

ذرائع کا کہنا تھا کہ مآرب کے محاذ میں تازہ آپریشن میں مںحرف سابق صدر علی عبداللہ صالح اور ایران نواز حوثی شدت پسندوں کو بھاری جانی اور مالی نقصان اٹھانا پڑا ہے۔