انوکھی وڈیو: ٹرمپ نے "سی این این" کو زمین پر پٹخ دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ٹوئیٹر پر ایک انتہائی عجیب نوعیت کی وڈیو پوسٹ کر کے میڈیا کو نئے انداز سے حملے کا نشانہ بنایا ہے۔ وڈیو میں ٹرمپ ایک پیشہ ور ریسلر کو زمین پر پٹختے ہوئے نظر آ رہے ہیں جب کہ اس ریسلر کے چہرے کو امریکی نیوز چینل "سی این این" کے لوگو سے تبدیل کر دیا گیا ہے۔ یہ وڈیو 10 برس پرانی ہے جس کو فری اسٹائل ریسلنگ کے حوالے سے ایک موقع پر خصوصی طور پر تیار کیا گیا تھا۔ اب اس وڈیو کو ٹرمپ کی جانب سے "ایم ایس این بی سی" چینل میں صحافیوں کو شدید تنقید کا نشانہ بنائے جانے کے ایک ہفتے بعد نشر کیا گیا ہے۔

فرانسیسی خبر رساں ایجنسی کے مطابق 28 سیکنڈوں کے دورانیے پر مشتمل وڈیو میں سوٹ میں ملبوس ٹرمپ ایک دوسرے شخص کو رِنگ کے باہر زمین پر پٹخ رہے ہیں اور پھر اس کے بعد انہوں نے اس شخص کو پیٹ ڈالا جس کے چہرے کو مسلسل "سی این این" کے لوگو سے ڈھانپ ہوا دکھایا گیا۔

وڈیو کے اختتام پر "سی این این" کے لوگو میں تحریف کر کے اس کو اسکرین پر "FNN" یعنی "فراڈ نیوز نیٹ ورک" کے نام سے پیش کیا گیا۔

انٹرنیٹ پر موجود اس وڈیو کے طویل ورژن سے ظاہر ہوتا ہے کہ ٹرمپ کے ہاتھوں پٹائی کا نشانہ بننے والا شخص WWE (ورلڈ ریسلنگ اینٹرٹینمنٹ) کا مالک اور ٹرمپ کا دوست Vince McMahon ہے۔

حالیہ کچھ عرصے سے امریکی صدر نے میڈیا کے خلاف اپنے حملوں کی یلغار میں اضافہ کر دیا ہے۔ ٹرمپ نے اپنی ٹوئیٹ میں "فیک نیوز سی این این" کے بجائے "فراڈ نیوز سی این این" کا ہیش ٹیگ استعمال کیا جب کہ اس سے قبل وہ میڈیا کی خبروں کے لیے "فیک" (جعلی) کا لفظ استعمال کرتے رہے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں