.

القطیف میں دہشت گردوں کے حملے میں سعودی سکیورٹی اہلکار شہید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے مشرقی صوبے القطیف کے علاقے عوامیہ میں دہشت گردوں کے حملے میں سکیورٹی فورسز کا ایک اہلکار شہید ہوگیا ہے۔

العربیہ نیوز چینل کی رپورٹ کے مطابق شہید اہلکار ایمرجنسی سکیورٹی فورس کا ملازم تھا۔ایک دہشت گرد گروپ نے عوامیہ کے علاقے المسورہ میں ترقیاتی منصوبے کے لیے آلات اور سامان لانے والی گاڑی کے ساتھ سکیورٹی پٹرول کو حملے میں نشانہ بنایا ہے اور اس میں سکیورٹی اہلکارعبداللہ ترکی الترکی جان کی بازی ہار گئے ہیں۔

المسورہ میں سکیورٹی فورسز کی نگرانی میں ایک ترقیاتی منصوبے پر کام جاری ہے۔اس علاقے میں ماضی قریب میں بھی دہشت گرد سکیورٹی فورسز کی گشتی پارٹیوں پر اسی انداز میں متعدد حملے کر چکے ہیں۔ المسورہ اور اس کے نواح میں مشتبہ جرائم پیشہ افراد اور جنگجوؤں نے اپنی خفیہ کمین گاہیں بنا رکھی ہیں اور ان تک پہنچنے کے لیے ایک ترقیاتی منصوبے پر کام جاری ہے۔

عوامیہ میں دہشت گردوں کے حالیہ حملوں میں شہید ہونے والے پانچ سکیورٹی اہلکاروں اور افسروں کے نام یہ ہیں: افسر وليد غثيان ضاوی الشيبانی،کارپورل عبدالعزيز التركی، میجر طارق العلاقی، سارجنٹ عادل العتيبی اورعبدالله تركی التركی۔صرف المسورہ میں حملوں میں بیس افراد زخمی ہوئے ہیں۔