.

ایران کا پہلا حج قافلہ بندر عباس ہوائی اڈے سے سعودی عرب روانہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایران نے فریضہ حج کی ادائی کے لیے عازمین کا پہلا دستہ سعودی عرب روانہ کردیا ہے۔

ایران کی سول ایوی ایشن تنظیم کے مطابق پہلی حج پرواز بندر عباس بین الاقوامی ہوائی اڈے سے اتوار کی صبح آٹھ بجے روانہ ہوئی۔ایران ائیر کے ذریعے مقامی وقت کے مطابق آج شام چار اور سات بجے دو اور پروازیں بھی روانہ ہونے والی تھیں۔

قبل ازیں ایران کے حج مشن کے نگران قاضی عسکر نے کہا کہ ایرانی عازمین حج کے پہلے دستے کو سعودی عرب بھیجنے کے لیے تمام ضروری انتظامات کر لیے گئے ہیں۔

اس سال ایران سے ساڑھے چھیاسی ہزار کے لگ بھگ عازمین فریضہ حج کی ادائی کے لیے سعودی عرب جائیں گے اور انھیں چھے سو قافلوں کی صورت میں بھیجا جائے گا۔

یادرہے کہ 2016ء کے اوائل میں تہران میں سعودی سفارت خانے اور مشہد میں قونصل خانے پر مشتعل مظاہرین کے حملے کے بعد دونوں ملکوں میں کشیدگی پیدا ہوگئی تھی جس کے بعد گذشتہ سال ایران نے حج کے لیے اپنے شہریوں اور سرکاری وفد کو نہیں بھیجا تھا۔

گذشتہ تین عشروں میں یہ پہلا موقع تھا کہ ایرانی عازمین نے حج نہیں کیا تھا اور اس کے بعد دونوں ملکوں کے درمیان شام اور یمن کے تنازعے پر سخت تناؤ پیدا ہوگیا تھا۔ گذشتہ سال ایرانی عازمین کو حج پر بھیجنے کے بارے میں دونوں ملکوں کے درمیان مذاکرات ویزوں کے اجراء اور سکیورٹی کے معاملے پر اختلافات کی وجہ سے نتیجہ خیز ثابت نہیں ہوسکے تھے لیکن اس سال دونوں ملکوں کے حکام کے درمیان اس معاملے پر مذاکرات کامیاب رہے تھے۔