.

کُرد وفاقی اسمبلی کا شمالی شام میں پہلے مقامی انتخابات کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شمالی شام میں Northern Syria Democratic Federal System Constituent Assembly نے جو کُرد "شمالی شام اتحاد" کے نام سے بھی معروف ہے.. رواں ماہ 27 سے 29 جولائی تک ہونے والے اجلاسوں کے بعد مقامی اور بلدیاتی انتخابات کرانے کا اعلان کیا ہے۔ یہ بات ہفتے کے روز ایک کُرد خبر رساں ایجنسی نے بتائی۔

منظر عام پر آنے والی تصاویر اور وڈیوز سے ظاہر ہو رہا ہے کہ شمالی شام کی وفاقی اسمبلی کے اجلاس کے ہال میں کرد رہ نما عبداللہ اوگلان کی تصویر آویزاں کی تھی۔

مذکورہ اتحاد نے جس کو بشار الاسد کی حکومت تسلیم نہیں کرتی ہے،، اعلان کیا کہ ان انتخابات کا پہلا مرحلہ آئندہ ماہ کی 22 تاریخ کو ہوگا۔ یہ مرحلہ بلدیاتی انتخابات پر مشتمل ہوگا۔

دوسرے مرحلے کا آغاز 3 نومبر سے ہو گا۔ اس مرحلے میں دیہات اور قصبوں میں بلدیاتی انتخابات ہوں گے۔ بعد ازاں 19 جنوری 2018 کو تیسرے اور آخری مرحلے میں صبوں کی کونسلوں کے انتخابات منعقد ہوں گے۔

ہفتے کے روز اختتام پذیر ہونے والے اجلاسوں میں انتخابی قانون اور انتظامی تقسیم کی منظوری دیے جانے کے علاوہ انتخابات کا جدول طے کیا گیا۔

کرد شمالی شام اتحاد کو ترکی کے ساتھ شامی سرحد پر رسوخ حاصل ہے جو انقرہ کی نظر میں اشتعال انگیز امر بھی ہو سکتا ہے۔ اب اس اتحاد کی جانب سے مقامی انتخابات کا اعلان کیا گیا ہے جب کہ ترکی ہمیشہ سے اس کو مسترد کرتا رہا ہے۔

مذکورہ وفاقی اتحاد کے قیام کا اعلان اس کی تاسیسی اسمبلی کی تشکیل پر اتفاق رائے ہونے کے بعد 17 مارچ 2016 کو گیا تھا۔ بشار حکومت نے ردّ عمل میں فوری طور پر باور کرایا تھا کہ اس اتحاد اور اسمبلی کی کوئی قانونی حیثیت نہیں اور کردوں کی جانب سے وفاقی نظام قائم کرنے کے اعلان کا سیاسی طور پر کوئی اثر نہیں۔

سیریئن ڈیموکریٹک فورس جو پہلے کرد پیپلز پروٹیکشن یونٹس کے نام سے معروف تھی وہ اُن علاقوں کے کچھ حصوں پر کنٹرول رکھتی ہے جہاں کرد اتحاد نے وفاقی قانون کے تحت انتخابات کرانے کا اعلان کیا ہے۔

اس سے قبل 2016 میں امریکی انتظامیہ نے اعلان کیا تھا کہ وہ شام میں خود مختار علاقوں کو ہر گز تسلیم نہیں کرے گی۔

کرد وفاقی اتحاد کی جانب سے شمالی شام میں انتخابات کرانے کا اعلان ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب عراق میں کرکوک صوبے کے گورنر نے اعلان کر چکے ہیں کہ کردستان ریجن کے حوالے سے ریفرنڈم کا انعقاد رواں برس ستمبر کے اواخر میں ہو گا۔