.

کویت : العبدلی سیل سے وابستہ ایک اور مجرم گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

کویت میں حکام نے العبدلی سیل سے وابستہ ایک اور مجرم مصطفیٰ عبدالنبی خان کو اتوار کے روز الرومیثیہ کے علاقے سے گرفتار کر لیا ہے۔ اس سے قبل دہشت گردی کے اس سیل سے وابستہ بارہ مجرموں کو گرفتار کیا جاچکا ہے۔اس سیل کے ایران اور لبنان کی شیعہ ملیشیا حزب اللہ سے روابط استوار تھے۔

کویتی حکام کو اس سیل کا اگست 2015ء میں پتا چلا تھا۔اس نے العبدلی کے علاقے میں واقع ایک فارم میں بھاری مقدار میں اسلحہ اور گولہ بارود چھپا رکھا تھا۔اس گروہ کے قبضے سے 19 ٹن گولہ بارود ، 144 کلو گرام دھماکا خیز مواد ، مختلف قسم کے 68 ہتھیار ، 204 دستی بم اور برقی لائٹر برآمد ہوئے تھے۔

ضلع العبدلی میں یہ فارم عراق کی سرحد کے نزدیک واقع ہے اور وہاں ان مشتبہ ملزموں کے مکانات موجود تھے۔چند روز قبل ہی کویت کی وزارت داخلہ نے ایک اپیل عدالت کے فیصلے پر عمل درآمد کرتے ہوئے العبدلی سیل سے وابستہ ان مطلوب مجرموں کے وارنٹ گرفتاری اور تصاویر جاری کی تھیں۔عدالت نے ان مطلوب مجرموں کی گرفتاری کا حکم دیا تھا۔

وزارت داخلہ نے شہریوں اور مکینوں کو ہدایت کی تھی کہ وہ ان مجرموں سے متعلق کسی بھی اطلاع کے بارے میں سکیورٹی فورسز کو مطلع کریں۔ان کی گرفتاری میں معاونت کے لیے 112 پر اطلاع دیں یا نزدیک ترین واقع پولیس اسٹیشن میں جا کر بتائیں۔

وزارت داخلہ نے یہ بھی واضح کیا تھا کہ جو لوگ بھی مجرموں کی معاونت کے قصور وار پائے جائیں گے،انھیں دو سال قید اور دو ہزار دینار تک جرمانے کی سزا کا سامنا ہوسکتا ہے۔وزارت کے اس اعلان کے بعد اسی ہفتے اس سیل سے وابستہ بارہ مجرموں کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔