.

داعش کے مبینہ حملے میں ترک پولیس اہلکار ہلاک

پولیس اہلکار کو مشتبہ شخص نے چاقو سے نشانہ بنایا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ترکی کے شہر استنبول میں ایک پولیس مرکز کے قریب مشتبہ شخص نے چاقو کے پے درپے کئی وار کر کے ایک پولیس اہلکار کو قتل کردیا۔

ترک خبر رساں ادارے’اناطولیہ‘ کے مطابق مشتبہ حملہ آور کا تعلق دہشت گرد تنظیم ’داعش‘ سے ہوسکتا ہے۔

خبر رساں ادارے کے مطابق مشتبہ حملہ آور کو پولیس اہلکاروں نے گولیاں ماریں جس کے نتیجے میں وہ ہلاک ہوگیا۔ حکام کا کہنا ہے کہ بہ ظاہر ایسے لگتا ہے کہ حملہ آور خود کش حملے کی تیاری کررہا تھا۔

خبر رساں ادارے نے انسداد دہشت گردی فورس کے ایک ذریعےکے حوالے سے بتایا ہے کہ استنبول میں پولیس نے داعش کے دو مشتبہ جنگجوؤں کا تعاقب کیا اور ان میں سے ایک کو حراست میں لے لیا گیا۔

اسے ایک پولیس گاڑی میں استنبول کے پولیس مرکز میں لے جایا جا رہا تھا کہ شاہراہ الوطن پر ایک مشتبہ شخص نے پولیس اہلکار پر چاقو سے حملہ کردیا۔ زخمی پولیس اہلکار کو اسپتال منتقل کیا گیا جو کچھ ہی دیر بعد زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گیا۔ پولیس نے مشتبہ حملہ آور پر فائرنگ کی جس کے نتیجے میں وہ بھی ہلاک ہوگیا۔