.

بیلجیئم اور برطانیہ میں ایک ہی وقت میں چاقو سے حملے

برسلز میں حملہ آور پولیس کی فائرنگ میں ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یورپی ملکوں برطانیہ اور بیلجیئم میں جمعہ کی شام مشتبہ شدت پسندوں کے چاقو سے حملوں میں متعدد پولیس اہلکار زخمی ہوئے ہیں۔ لندن اور برسلز میں چاقو کے حملوں کے واقعات ایک ہی گھنٹے کے اندر پیش آئے ہیں۔

بیلجیئم کے پراسیکیوٹر جنرل کے مطابق دارالحکومت برسلز میں گرین بلاس کے مقام پر پولیس اہلکار پر چاقو سے حملہ کرنے والے شخص کو گولی ماری دی گئی جس کے نتیجے میں وہ ہلاک ہوگیا۔ مقتول کی مزید شناخت نہیں ہوسکی تاہم اس کی عمر تیس سال بتائی جاتی ہے۔ پولیس نے واقعے کی دہشت گردی کے پہلو سے تحقیقات شروع کردی ہیں۔

بیلجیئن پراسیکیوٹر کے ترجمان نے بتایا کہ حملہ آور نے پولیس اہلکار کو چاقو گھونپنے سے قبل ’اللہ اکبر‘ کا نعرہ لگایا۔ چاقو کے حملے میں پولیس اہلکار کو معمولی زخم آئے ہیں اور اسے علاج کے لیے اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔ پولیس نے فوری کارروائی کرتے ہوئے ملزم کو گولیاں مار کر ہلاک کردیا۔

ادھر برطانوی دارالحکومت لندن میں شاہی خاندان کی رہائش گاہ بکنگھم پیلس کے باہر چاقو سے مسلح ایک شخص کو گرفتار کرنے کی کوشش میں دو پولیس اہلکار زخمی ہو گئے ہیں۔

میٹرو پولیٹن پولیس کے مطابق دونوں پولیس اہلکار معمولی زخمی ہوئے ہیں اور انھیں ہسپتال منتقل کرنے کی بجائے جائہ وقوعہ پر ہی طبی امداد دی گئی۔

پولیس کا کہنا ہے کہ ابھی یہ کہنا قبل از وقت ہے کہ آیا یہ واقعہ دہشت گردی کا تھا اور اس وقت پولیس اہلکار جائے وقوعہ پر موجود ہیں اور تحقیقات کی جا رہی ہیں۔

پولیس اہلکاروں نے اس شخص کو بکنگھم پیلس کے باہر روکا اور اب اسے حملہ کرنے کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔